گاڑی چلانے پر سعودی نے بیوی کو طلاق دے دی

گاڑی چلانے پر سعودی نے بیوی کو طلاق دے دی
گاڑی چلانے پر سعودی نے بیوی کو طلاق دے دی

  


جدہ (بیورورپورٹ ) سعودی باشندے نے اپنی بیوی کو ملکی قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ڈرائیونگ کرنے پر طلاق دے دی۔ سعودی باشندے کا یہ اقدام آج کل سوشل میڈیا پر بہت زیادہ زیربحث ہے اور صارفین دو حصوں میں بٹے ہوئے ہیں، ایک حصہ مرد جبکہ دوسرا خاتون کی حمایت کر رہا ہے۔ اس واقعہ کے بعد خواتین کے حقوق کا معاملہ بھی سر اٹھا رہا ہے اور بلاگ میں شامل ایک صارف کا کہنا ہے کہ اسلام میں عورت پر ڈرائیونگ کرنے پر کوئی پابندی نہیں تو سعودی حکومت ایسا کیوںکر رہی ہے؟ ایک اور بلاگر کا کہنا ہے کہ یہ تعجب انگیز ہے کہ ایک عورت خود تو گاڑی نہیں چلا سکتی لیکن وہ کسی غیر ملکی ڈرائیور کے ساتھ سفر کر سکتی ہے۔ مرد کی حمایت کرنے والے بلاگر کا کہنا ہے کہ سعودی باشندے نے طلاق دے کر بالکل ٹھیک کیا کیوں کہ ایک بیوی کو اپنے شوہر کی ہدایات پر عمل کرنا چاہیے۔ پھر اس خاتون نے نہ صرف ڈرائیونگ کی بلکہ اس ڈرائیونگ کی ویڈیو بنا کر یوٹیوب پر بھی ڈالی۔ ایک اور سوشل میڈیا صارف نے اس معاملہ پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ شوہر کی ہدایات نہ ماننے پر بیوی کو طلاق دینے کا فیصلہ درست ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...