قدرت نے رانا ثناءاللہ کی مونچھیں نیچی کر دیں

قدرت نے رانا ثناءاللہ کی مونچھیں نیچی کر دیں
قدرت نے رانا ثناءاللہ کی مونچھیں نیچی کر دیں

  


لاہور (نیوز ڈیسک)ملک بھر میں بارشوں سے موسم خوشگوار ہو گیا ہے لیکن پھر بھی متعدد شہرو ں میں بجلی کی لوڈشیڈنگ جاری ہے ۔ اتوار کے روز جب صوبائی وزیر رانا ثنا ءاللہ خان سے پوچھا گیا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف کے جلسے سے قبل لوڈشیڈنگ ختم کر دی گئی تھی تو کیا یہ ان کے جلسہ کے ڈر سے تھا تو ان کا جواب تھا کہ ایسی کوئی بات نہیں لوڈشیڈنگ موسم خوشگوار ہونے کے باعث ختم کی گئی ۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ جمعہ کے روز سے ملک بھر میں لوڈشیڈنگ نہیں کی جارہی تھی جبکہ موسم بھی کوئی خاص خوشگوار نہ تھا ۔ ہفتہ کے روز حیدر آباد اور گرد ونواح میں لوڈشیڈنگ پر لوگوں نے احتجاج بھی کیا ۔ جبکہ دوسری جانب پیر کے روز لوڈشیڈنگ کا آغاز ہو گیا او رمختلف شہرو ں میں بجلی کی بندش شروع ہو گئی ۔ گوکہ وزارت بجلی نے شام کو یہ خوشخبری سنائی کہ لوڈشیڈنگ ختم کر دی گئی لیکن یہ صرف خبر کی حد تک تھا جبکہ متعدد شہروں جن میں لاہور ، فیصل آباد ، سیالکوٹ ، گوجرانوالہ میں بجلی بند تھی ۔ اس بندش کووزارت بجلی نے بارش پر ڈالتے ہوئے جان چھڑالی ۔ منگل کی رات کو بھی بیشتر شہروں میں بارش ہوئی اور درجہ حرارت گر گیا جس کے باعث بجلی کے استعمال میں کمی ہوئی لیکن پھر بھی لوڈشیڈنگ جاری و ساری ہے۔ دوسرے الفاظ میں رانا ثناءللہ کا دعویٰ کہ خوشگوار موسم کے باعث لوڈشیڈنگ ختم کی گئی غلط ثابت ہوا اور حکومت کے ساتھ ساتھ قدرت نے بھی وزیر قانون پنجاب کی مونچھیں ہی نیچی کر دیں ۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...