باہمی تجارت 2ارب ڈالر تک بڑھانے کی گنجائش موجود ہے ، تھائی سفیر

باہمی تجارت 2ارب ڈالر تک بڑھانے کی گنجائش موجود ہے ، تھائی سفیر

 اسلام آباد(آن لائن) اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے ایک وفد نے چیمبر کے صدر عاطف اکرام شیخ کی قیادت میں تھائی لینڈ سفارتخانے کا دورہ کیا اور تھائی لینڈ کے سفیر جناب سیچارٹ لنگسنگ تھانگ سے پاکستان اور تھائی لینڈ کے درمیان دو طرفہ تجارت کو مزید بہتر کرنے کے امور پر تبادلہ خیال کیا۔ وفد سے خطاب کرتے ہوئے تھائی لینڈ کے سفیر سیچارٹ لنگسنگ تھانگ نے کہا کہ تھائی لینڈ پاکستان کے ساتھ مضبوط تجارتی و اقتصادی تعلقات قائم کرنے کو بہت اہمیت دیتا کیونکہ پاکستان جنوبی ایشیاء کی ایک اہم معیشت کے طور پر ابھر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تھائی لینڈ اور پاکستان کی دوطرفہ تجارت اس وقت تقریباایک ارب ڈالر تک ہے تاہم دونوں ممالک کے نجی شعبوں کے درمیان بہتر روابط قائم کر کے سالانہ باہمی تجارت کو 2ارب ڈالر تک بڑھایا جا سکتا ہے۔ تھائی لینڈ کے سفیر نے کہا کہ پاکستان اور تھائی لینڈ آزاد تجارت کا معاہدہ کرنے کیلئے کوششوں میں مصروف ہیں اور اس امید کا اظہار کہا کہ یہ معاہدہ اس سال کے آخر تک طے پا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ آزاد تجارت کا معاہدہ طے پانے سے دونوں ممالک کے مابین نہ صرف باہمی تجارت کو بہتر فروغ ملے گا بلکہ دونوں کے باہمی تعلقات کو بھی تقویت ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی ٹیکسٹائل مصنوعات تھائی لینڈ میں کافی مقبول ہیں اور تھائی لینڈ پاکستان سے ان مصنوعات کی درآمد کو مزید بڑھانے پر غو ر کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی معیشت کے سائز کو مدنظر رکھتے ہوئے تھائی لینڈ سمجھتا ہے کہ پاکستان کے ساتھ بہتر تجارتی تعلقات دونوں کیلئے فائدہ مند ثابت ہوں گے۔ انہوں نے یقین دہانی کرائی کہ تھائی لینڈ کا سفارتخانہ تاجر برادری کو دونوں ممالک کے درمیان باہمی تجارت کو بہتر کرنے کی کوششوں میں ہر ممکن سہولت فراہم کرے گا۔

اس موقع پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر عاطف اکرام شیخ نے کہا کہ پاکستان اور تھائی لینڈ کے نجی شعبوں کے درمیان براہ راست مضبوط روابط کا قیام باہمی تجارت کو بہتر کرنے کیلئے بہت ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ تجارتی وفود کا باقاعدگی کے ساتھ باہمی تبادلہ اور ایک دوسرے کے ملک میں تجارتی نمائشوں کا انعقاد دوطرفہ تجارت کو بہتر کرنے میں موثر کردار ادا کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی ٹیکسٹائلز مصنوعات، ریڈی میڈ گارمنٹس، آلات جراحی، کھیلوں کا سامان، چمڑے کی مصنوعات، پھل و سبزیوں سمیت متعدد مصنوعات تھائی لینڈ کی مارکیٹ میں مقبولیت حاصل کر سکتی ہیں لہذا تھائی لینڈ ان مصنوعات کی پاکستان سے درآمد بڑھانے پر توجہ دے۔ انہوں نے کہا کہ تھائی لینڈ کے سامایہ کاروں کیلئے پاکستان کی معیشت میں انفراسٹریکچر کی ترقی، توانائی، آٹو پارٹس کی تیاری، فوڈ پراسسنگ، پیکیجنگ، جیمز و جیولری، سیاحت اور ہوٹل انڈسٹری سمیت دیگر شعبوں میں سرمایہ کاری کے عمدہ مواقع موجود ہیں لہذا وہ ان مواقعوں سے فائدہ اٹھانے کیلئے کوششیں تیز کریں ۔عاطف اکرام شیخ نے کہا کہ تھائی لینڈ اور پاکستان کے درمیان قریبی تعاون دونوں ممالک کیلئے فائدہ مند ثابت ہو گا کیونکہ پاکستان تھائی لینڈ کو جنوبی اور مرکزی ایشیائی ممالک کے ساتھ تجارت کو بہتر کرنے میں تعاون کر سکتا ہے جبکہ تھائی لینڈ پاکستان کو آسیان ممالک تک بہتر رسائی حاصل کرنے میں مدد کر سکتا ہے۔ انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ دونوں ممالک نجی شعبوں کو باہمی تجارتی و اقتصادی تعلقات کو بہتر کرنے کیلئے کلیدی کردار ادا کرنے کے مواقع فراہم کریں تا کہ دوطرفہ تجارت اصل صلاحیت کے مطابق فروغ پا سکے۔ انہوں نے یقین دہانی کرائی کہ اسلام آباد چیمبر آف کامرس دونوں ممالک کے درمیان تجارتی و اقتصادی تعلقات کو مضبوط کرنے کیلئے تھائی لینڈ کے سفارتخانے کے ساتھ مل کر کام کرنے کی کوشش کرے گا۔ ۔#/s

مزید : کامرس