نظام تعلیم کو چلانے میں ناکام حکومت کس کس محکمے کی نجکاری کریگی،اللہ بخش قیصر

نظام تعلیم کو چلانے میں ناکام حکومت کس کس محکمے کی نجکاری کریگی،اللہ بخش قیصر

لاہور( نامہ نگار) پنجاب ٹیچرز یونین کے ضلعی صدر ظہور احمد اور مرکزی صدر اللہ بخش قیصر نے کہاہے کہ پنجاب ٹیچرز یونین 15مئی بروز اتوار اڑھائی بجے دن اساتذہ کے حقوق کی خاطرکمپنی باغ سرگودھا میں ایک پرہجوم جلسہ کریگی اور جلسہ کے بعد ریلی نکالی جائے گی ۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ حکومت پنجاب تعلیمی اداروں پنجاب ایجوکیشن فاؤنڈیشن ، ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز،اور این جی اوز کے حوالے کر کے نجکاری کرنا چاہتی ہے ۔ صوبے میں نظام تعلیم کو چلانے میں ناکام ہونیوالی حکومت کس کس محکمے کی نجکاری کریگی ۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ تعلیم ایک ایسا محکمہ ہے جس سے منفعت کا کوئی تصور نہیں۔

یہ ذمہ داری ہے کہ وہ پاکستان کے تمام شہریوں کو تعلیم مفت فراہم کرے ۔ مگر موجودہ حکومت گزشتہ کئی برسوں سے اساتذہ کو بدنام کرنے کیلئے ایک ڈس انفارمیشن سیل کے ذریعے کروڑوں روپے خرچ کرنے کے بعد عوام کے ذہنوں میں یہ بات پیدا کر چکی ہے کہ استاد کام چور ہے اور پڑھاتا نہیں ہے اس لئے ہم تعلیم کو پرائیویٹ سیکٹر کے حوالے کر رہے ہیں ۔ جبکہ آئین پاکستان اس بات کی اجازت نہیں دیتا ۔ 1973ء میں پرائیویٹ تعلیمی اداروں کو قومی ملکیت میں لیا گیا اور اس کے پرائیویٹ اساتذہ کو سرکاری ملازمت کا حق عطا کیا گیا دور حاضر کے حکمران اپنے اس کردار سے نہ صر ف اساتذہ کا روزگار ختم کرنا چاہتے ہیں بلکہ تعلیم کے دروازے عام لوگوں پر بند کئے جارہے ہیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4