اسلحہ لائسنس کی تجدید میں 6ماہ کی توسیع ، ای پاسپورٹ کے اجراء کی منظوری

اسلحہ لائسنس کی تجدید میں 6ماہ کی توسیع ، ای پاسپورٹ کے اجراء کی منظوری

 اسلام آباد( ما نیٹر نگ ڈیسک) وزیر داخلہ چودھری نثار نے اسلحہ لائسنس کی تجدید میں 6ماہ کی توسیع اور ای پاسپورٹ کے اجراء کی اصولی منظوری دیدی،ای پاسپورٹ منصوبہ 2017تک مکمل آپریشنل ہو جائے گا۔ اسلحہ لائسنس کی تجدید یکم جون 2016سے شروع ہوگی،مقررہ تاریخ تک اسلحہ لائسنس کی تجدید نہ کروانے والوں کے لائسنس منسوخ کر دئیے جائیں گے۔ جمعہ کو وزیر داخلہ چودھری نثار کی زیر صدارت وزارت داخلہ میں اعلیٰ سطحی اجلاس ہوا،جس میں سیکر ٹری وزارت داخلہ ،سپیشل سیکر ٹری وزارت داخلہ ،ڈی جی ایف آئی اے ،ڈی جی پاسپورٹ ،ڈی جی نادرا اور وزارت داخلہ کے اعلیٰ حکام نے شرکت کی ۔اجلاس میں حکام کی جانب سے چودھری نثار کو آگاہ کیا گیا کہ گزشتہ سال 31دسمبر تک اسلحہ لائسنس کو کمپیوٹرازڈ کر انے کی آخری تاریخ مقرر کی گئی تھی ،مقررہ تاریخ تک 1لاکھ 80ہزار اسلحہ لائسنس کمپیوٹرازڈ کئے گے،جبکہ اس دوران 8ہزار بوگس اسلحہ لائسنس نکلے ، اس موقع پر وزیرداخلہ نے بوگس لائسنس رکھنے والوں کیخلاف مقدمات درج کر نے اور ایف آئی اے کو اس حوالے سے تحقیقات کر نے کی ہدایت کر دی، اس موقع پر وزیر داخلہ نے کہا کہ پہلے مرحلے میں اسلحہ لائسنس کمپیوٹرازڈ کر نے پر موثر انداز میں آگاہی مہم نہیں چلائی گئی تھی جس کی وجہ سے مکمل طور پر اسلحہ لائسنس کمپیوٹرازڈ نہیں ہو سکے تھے،اب اس حوالے سے باقاعدہ موثر آگاہی مہم چلائی جائے۔اجلاس میں ڈی جی پاسپورٹ نے ای پاسپورٹ کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ د یتے ہوئے بتایا کہ ای پاسپورٹ کے ذریعے پاسپورٹ میں ایک ڈیجیٹل چپ لگائی جائے گی جس میں متعلقہ شخص کی مکمل بائیومیٹرک تفصیلات ہوں گی ، ای پاسپورٹ سے غیر قانونی طور پر بنائے جانے والے پاسپورٹس کا خاتمہ ہو سکے گا ۔اس موقع پر چودھری نثار نے کہا کہ ای پاسپورٹ سروس سے انسانی سمگلنگ کے خاتمے میں مدد ملے گی، غیر قانونی طور پر حاصل کئے گئے پاسپورٹس سے پوری دنیا میں پاکستان کے تشخص کو نقصان پہنچا ، ای پاسپورٹ کے اجراء سے ایسے عناصر کو روکنے میں مدد ملے گی ۔وزیر داخلہ نے ڈی جی پاسپورٹ کو پاسپورٹ کی پرنٹنگ اور اس حوالے سے مشنری کو مزید بہتر کر نے کی ہدا یت بھی کی۔

مزید : صفحہ اول