نوجوان کی نظربند ی کیخلاف درخواست، ہوم سیکرٹری پنجاب اور ڈی سی او اوکاڑہ سے جواب طلب

نوجوان کی نظربند ی کیخلاف درخواست، ہوم سیکرٹری پنجاب اور ڈی سی او اوکاڑہ سے ...

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے نوجوان کو نظربند کرنے کے خلاف درخواست پر ہوم سیکرٹری پنجاب اور ڈی سی او اوکاڑہ سے 20 مئی تک جواب طلب کر لیا، جسٹس عبدالسمیع خان نے صفیہ اختر کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار کی طرف سے اکبر علی ڈوگر ایڈووکیٹ نے موقف اختیار ضلعی انتظامیہ نے انجمن مزارعین سے تعلقات کی بنا پر درخواست گزار کے طالب علم بیٹے عبداللہ طاہر کو نظربند کر دیا ہے، نوجوان کا کسی تنظیم سے تعلق نہیں ہے لیکن انتظامیہ نے قانون کا غلط استعمال کرتے ہوئے نوجوان کو نظربند کررکھا ہے ، نظربندی کیخلاف ہوم سیکرٹری نے عرضداشت بھی مسترد کر دی ہے، انہوں نے استدعا کی کہ نوجوان کی نظربندی ختم کرتے ہوئے اسے رہا کرنے کا حکم دیاجائے، عدالت نے ہوم سیکرٹری اور ڈی سی او اوکاڑہ سے 20 مئی تک جواب طلب کر لیاہے۔

مزید : صفحہ آخر