پبلک سروس کمشن میں شہری اور دیہی تناسب برابر کیا جائے ، خواجہ اظہار الحسن

پبلک سروس کمشن میں شہری اور دیہی تناسب برابر کیا جائے ، خواجہ اظہار الحسن

 کراچی (اسٹاف رپورٹر)سندھ اسمبلی میں قائد حزب اختلاف خواجہ اظہارالحسن نے وزیراعلی سندھ سے مطالبہ کیاہے کہ سندھ پبلک سروس کمیشن کی باڈی میں شہری اوردیہی سندھ کا تناسب برابراورکمیشن میں ایک خاتون ممبرکا اضافہ کیا جائے۔جمعہ کو سندھ اسمبلی میں قائد حزب اختلاف خواجہ اظہارالحسن نے سندھ سیکرٹریٹ میں چیئرمین سندھ پبلک سروس کمیشن سے ملاقات کی اورکمیشن میں مالی بے ضابطگیوں کا معاملہ اٹھایا۔خواجہ اظہارالحسن نے کہا کہ سندھ پبلک سروس کمیشن میں شہری علاقے کی نمائندگی نہیں ہے جبکہ کمیشن میں ایک خاتون ممبرکوشامل کیا جائے۔خواجہ اظہارالحسن نے 35 صوبائی محکموں کا ذکرکرتے ہوئے کہاکہ صرف 6افسران کا تعلق شہری علاقوں سے ہے۔انہوں نے کہاکہ پبلک سروس کمیشن کے پانچ برس کے نتائج ظاہرکرتے ہیں کہ شہری علاقوں سے امیدوارکامیاب نہیں ہوئے ہیں۔چئیرمین سندھ پبلک سروس کمیشن نے خواجہ اظہارالحسن کوبتایا کہ شہری علاقوں سے بہت کم لوگ مقابلے کے امتحان میں شرکت کرتے ہیں،تاہم قائد خزب اختلاف نے کہاکہ دیہی سندھ کے لوگ شہری علاقوں سے ڈومیسائل بناکرشہری کوٹے پرقبضہ کرتے ہیں جس کی حوصلہ شکنی ہونی چاہیے۔

مزید : کراچی صفحہ اول