فضائی غبارے میں مزے لیتے ہوئے نوجوان لڑکی ایک ایسی چیز پر جاگری کہ جان کر کسی کی بھی جان نکل جائے

فضائی غبارے میں مزے لیتے ہوئے نوجوان لڑکی ایک ایسی چیز پر جاگری کہ جان کر کسی ...
فضائی غبارے میں مزے لیتے ہوئے نوجوان لڑکی ایک ایسی چیز پر جاگری کہ جان کر کسی کی بھی جان نکل جائے

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں ایک لڑکی نے گیسی غبارے کے ساتھ فضاﺅں میں اڑتے ہوئے سیلفی بنائی اور پھر ایسا حادثہ رونما ہو گیا کہ آدمی جان کر ہی خوفزدہ ہو گئے۔ دی میٹرو کی رپورٹ کے مطابق ربیکا فرائی نامی یہ 23سالہ لڑکی برطانوی علاقے نارتھ ایمپٹن شائر میں گرم ہوا کے غبارے کے ساتھ فضاءمیں پرواز سے لطف اندوز ہو رہی تھی کہ غبارہ پھٹ گیا اور وہ سیدھی نیچے موجود بجلی کے تاروں پر آ کر گری جن میں 33ہزار وولٹ کرنٹ دوڑ رہا تھا۔

’میں بس پر بیٹھی تو ساتھ کھڑے شخص نے مجھے بوتل کی پیشکش کی، میں نے انکار کردیا تو وہ یہ شرمناک کام کرنے لگا، ڈرائیور کو شکایت لگائی تو مدد کرنے کی بجائے اس نے۔۔۔‘ نوجوان لڑکی نے اپنے ساتھ پیش آنے والا ایسا واقعہ سنادیا کہ جان کر ہر مرد شرمندہ ہوجائے

رپورٹ کے مطابق ربیکا کا چہرہ، ہاتھ، ٹانگیں اور پشت سمیت جسم کا بیشتر حصہ جل گیا لیکن وہ بہت خوش قسمت تھی کہ اس کی جان بچ گئی۔ اسے ہیلی کاپٹر کے ذریعے فوری طور پر ہسپتال پہنچایا گیا جہاں اس کی حالت خطرے سے باہر بتائی جاتی ہے۔ ربیکا کا کہنا ہے کہ ”غبارہ پھٹنے کے بعد مجھے اتنا یاد ہے کہ میں بجلی کے تاروں پر گری تھی اوران سے ٹکرانے کے بعد آگ کا ایک گولہ اٹھتے ہوئے دیکھا تھا۔ اس کے بعد میں بے ہوش ہو گئی۔“پولیس کے مطابق اس غبارے کا پائلٹ معجزانہ طور پر زخمی ہونے سے بھی محفوظ رہا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -