خیبر پختونخوا میں بغیرڈاکٹری نسخے دواکی فروخت پر پابندی عائد

خیبر پختونخوا میں بغیرڈاکٹری نسخے دواکی فروخت پر پابندی عائد

  

اسلام آباد/پشاور(صباح نیوز) خیبرپختوا حکومت نے اپنے صوبے میں ڈاکٹروں کے نسخے کے بغیر دواں کی فروخت پر پابندی عائدکردی۔ڈرگ قوانین میں ترمیم کے بعد اب کے پی کے میں کوئی بھی میڈیکل اسٹور یا فارمیسی بغیر ڈاکٹری نسخے کے ادویہ فروخت نہیں کرسکے گا، وزارتِ صحت کے پی کے نے ڈرگ قوانین 1982میں ترمیم کے بعد ڈاکٹروں کی ہدایت کے بغیرادویہ فروخت کرنے پر پابندی لگادی ہے۔ مزید برآں میڈیکل اسٹور والوں کوبھی پابند کیاگیا ہے کہ ڈرگ لائسنس کی معیاد ختم ہونے سے ایک ماہ قبل ڈرگ لائسنس کی تجدیدکرائی جائیگی بصورت دیگر قانونی کارروائی بھی عمل لائی جائیگی، دریں اثنا محکمہ صحت کے ماتحت کراچی سمیت صوبے سندھ میں سندھ فارمیسی کونسل مکمل غیر فعال ہے،کراچی میں ڈاکٹری نسخوں کے بغیرکھلے عام دوائیں فروخت کی جارہی ہیں۔کراچی میں محکمہ صحت کی عدم توجہی کی وجہ سے ڈرگ انسپکٹرزصرف ڈرگ لائسنس کی رپورٹ بنانے پر توجہ دیتے ہیں، جس کی وجہ سے کراچی میں ڈاکٹری نسخوں کے بغیرکھلے عام دوائیں فروخت کی جارہی ہیں،کراچی سمیت صوبے بھر میں 50ہزار میڈیکل اسٹور قائم ہیں جہاں چھوٹے چھوٹے بیشتر میڈیکل اسٹوروں پر مستند فارمیسی عملے کے بجائے ڈسپسنرز یا غیرتربیت یافتہ عملہ ادویہ فروخت کررہا ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -