طالبہ کو دھوپ میں کھڑا کرکے معلمہ فیس بک میں مصروف،طالبہ بے ہوش

طالبہ کو دھوپ میں کھڑا کرکے معلمہ فیس بک میں مصروف،طالبہ بے ہوش

  

باگڑ سرگانہ(نمائندہ پاکستان)بغیر اجازت پانی پینے پر معلمہ نے 11سالہ طالبہ کو دھوپ میں کھڑاکرکے خود کو فیس بک پر مصروف کرلیا ،طالبہ بے ہوش ،ہسپتال داخل ۔گورنمنٹ گرلز پرائمری سکول رام چونترہ کی معلمہ راشدہ نے بغیر اجازت پانی پینے کیلئے جانے پر پانچویں جماعت کی 11 سالہ طالبہ حوریہ صفدر کو ہاتھ کھڑے کرکے دھوپ میں کھڑا ہونے کی سزادی اور خود کمرے میں جاکر فیس بک پر مصروف ہوگی،(بقیہ نمبر53صفحہ12پر )

بطور سزا طالبہ کافی دیر تک دھوپ میں کھڑی رہی ،جس سے طبیعت خراب ہوگئی اور چکر اکر بے ہوش ہوکر گرگئی اور جس پر سکول میں شور مچا اور معصوم طالبہ کے والدین آگئے ،جو اس لیکر مقامی عوامی ہسپتال گئے ،جہاں طالبہ کی حالت انتہائی خراب تھی اور گرمی کی شدت کی وجہ سے جسم کا ٹمپر یچر102پر تھا ،اب معصوم طالبہ کی حالت خطرہ سے باہر بتائی جارہی ہے ،طالبہ کے والد نے صحافیوں کو بتایا کہ رام چونترہ سکول میں تعینات ہونے والی نئی ایجوکیٹرز راشدہ اور صائمہ ہروقت موبائل پر مصروف رہتی ہیں جبکہ قابل فکر بات یہ ہے کہ درجہ چہارم میں تعینات ہونے والی خاتو ن رقبہ بھی ہر وقت فیس بک میں مصروف رہتی ہے میری بیٹی کے ساتھ زیادتی ہوئی ہے ،ڈی سی او خانیوال نوٹس لیکر معلمات کے خلاف کارروائی کریں ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -