میونسپل کمیٹی خانیوال کا اجلاس شدید بدنظمی،ہنگامہ آرائی کی نذر ہوگیا

میونسپل کمیٹی خانیوال کا اجلاس شدید بدنظمی،ہنگامہ آرائی کی نذر ہوگیا

  

خانیوال(بیورونیوز)میونسپل کمیٹی خانیوال کااجلاس شدید بدنظمی اورہنگامہ کی نذر۔کنونیئر نے چیف آفیسر کے توہین آمیز رویے پر احتجاج اجلاس ملتوی کر دیا۔ تفصیل کے مطابق میونسپل کمیٹی خانیوال کااجلاس زیرصدارت وائس چیئرمین کنونیئر راناعبدالرحمن خاں منعقد ہوا۔تلاوت قرآن پا کے بعد راناعبدالرحمن خاں نے کونسلر املاک خان ڈاہا کے بھائی کی وفات پر فاتحہ خوانی کرائی۔سابقہ (بقیہ نمبر44صفحہ7پر )

اجلاس کی کاروائی توسیع کیلے پیش کی جارہی تھی کہ شیخ فتح علی نے کہاکہ انکوائری کمیٹیوں میں قرارداد پیش کرنے والے رکن کو ممبرہوناچاہیے جس پر کنونیئرنے وضاحت کیلے چیف آفیسر شو کت حیات مجوکہ کو کہاکہ توانہوں نے اپنی نشست پر بیٹھے ہوئے ہی کہاکہ اس حوالے سے آئندہ اجلاس میں وضاحت کروں گا۔جس پر کنونیئر نے چیف آفیسر کو ہدایت کی کہ وہ آج کے اجلاس میں ہی اس کی وضاحت پیش کریں۔اس پر اراکین نے بھی کنونیئر کے موقف کی بھرپور تا ئید کی۔چیف آفیسر وضاحت کرنے کی بجائے اجلاس سے ہی اٹھ کر چلے گے۔جس پر کنونیئر راناعبدالرحمن خاں نے رولنگ دیتے ہو ئے کہاکہ چیف آفیسر نے میونسپل کمیٹی خانیوال کے مقد س ایوان اور54ارکین کے عزت ووقار کومجروح کیاہے۔اس کیخلاف قانون کے مطابق کاروائی عمل میں لائی جائے۔اوراراکین کی طرف سے چیف آفیسرکے رویے کی شدید مذمت کرتے ہوئے قانونی کاروائی عمل میں لانے کی مکمل تائید کی اورکہاکہ چیف آفیسر اجلاس سے اٹھ کر چلے گئے ہیں اب ایسے کرپٹ چیف آفیسر کو دفترمیں بھی نہیں بیٹھنے دیں گے۔ ۔اس دوران شیخ فتح علی،شیخ محمدعلی،شیرمحمد ،چوہدری شاہدسعید ،رشاد احمد اوردیگراراکین نے چیئرمین مسعود مجید ڈاہا سے کہاکہ ہاؤ س کا اس طرح تقدس پامال کرنے پر اورچیف آفیسر کے اس توہین آمیز رویے پر وہ کیوں چپ سادھے ہوئے ہیں۔جس پر چیئر مین مسعودمجید ڈاہا نے کہاکہ مجھے اراکین کی عزت وقار اور ہاؤس کاتقدس انتہائی عزیز ہے لیکن جب چند دن پہلے چیئرمین کیخلاف نعرے با ز ی اورتوہین آمیزکلمات اوراحتجاج کیاگیا اس وقت اس ہاؤس کی عزت کا کسی کوخیال نہیں جس پر شیخ فتح علی ،شیخ محمدعلی اوران کے دیگرساتھیو ں نے ہنگامہ کردیا اورکہاکہ ہمارے کیخلاف ناجائز ،جھوٹے پرچے ہوئے ،غریبوں کی روزی چھینی گئی اور یوں اجلاس میں ہنگامہ ہوگیا کان میں پڑی آواز سنائی نہیں دے رہی تھی ۔ایوان مچھلی منڈی بن گیا اس دوران رانا اکرام چیئرمین کے تحفظ کیلے آگے بڑھے تو شیخ فتح علی ،شیخ محمدعلی کی طرف سے پانی کی بوتل دے ماری گئی اور جس پر ہنگامے میں مزید شدت آگئی ننگی گالیاں اور ممبران اپنی نشستوں پر کھڑے ہو گئے آستینیں چڑھا لی۔کئی اراکین بیچ بچاؤکراتے رہے لیکن اراکین لڑتے جھگڑے گالی گلوچ کرتے ایوان سے باہر آگئے اورایک دوسرے کو دھمکیاں دیتے رہے۔بعدازاں چیئرمین مسعود مجید کے دفترمیں عاشق علی کھوکھر، اشرف گادھی،چوہدری انور جٹ، عبدالصمد خٹک،راؤ امان اللہ ،رانا شبیر ، شیخ بلال،چوہدری شاہد اوردیگرنے اس واقعہ کو انتہائی افسوس قرار دیا اور چیف آفیسر کے رویے کی شدید مذمت کی ۔جبکہ شیخ فتح علی اور شیخ محمدعلی کے رویے پر افسوس کااظہار کیاگیا۔ہنگامے کی اطلاع پھیلتے ہی مسلم لیگی کارکنوں اور شہریوں کی بڑی تعداد میونسپل میں جمع ہوگئی۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -