ن لیگ کے رئیس محبوب، عادل عبداللہ پی ٹی آئی کو پیارے ہوگئے

14 مئی 2018 (10:56)

رحیم یار خان، میانوالی (ویب ڈیسک) مسلم لیگ ن کے ممبر صوبائی اسمبلی رئیس محبوب اور سابقہ ایم پی اے عادل عبداللہ روکھڑی تحریک انصاف کو پیارے ہوگئے۔

روزنامہ ایکسپریس کے مطابق گزشتہ روز جنوبی پنجاب متحدہ محاذ ساتھیوں سمیت چھوڑ کر پی ٹی اائی میں شامل ہونے والے مخدوم خسرو بختیار جب لاہور سے رحیم یار خان کے لئے روانہ ہوئے تو ان کے نجی طیارے میں ممبر صوبائی اسمبلی رئیس محبوب احمد بھی سوار تھے۔ ن لیگ کے ایم پی اے رئیس محبوب احمد کی مخدوم خسرو بختیار کے ہمراہ آمد اور ان کی رہائش گاہ پر ہونے والی ایک اہم میٹنگ میں شمولیت پر عوامی حلقوں میں یہ رائے قائم ہوچکی ہے کہ رئیس محبوب تحریک انصاف کو پیارے ہوگئے ہیں جبکہ مسلم لیگ ن کے سابقہ ایم پی اے عادل عبداللہ روکھڑی نے پاکستان تحریک اصاف کے ممبر شپ کیمپ میں جاکر ممبر شپ فارم پر دستخط کئے، یہاں موجود عمران خان کے چیف سکیورٹی آفیسر احمد خان نے ان کا استقبال کیا۔

عادل عبداللہ خان سابقہ ایم پی اے، ایم این اے عامر حیات روکھڑی مرحوم کے بیٹے اور سینیٹر، ایم این اے امیر عبداللہ روکھڑی مرحوم کے پوتے اور چیئرمین ضلع کونسل گل حمید روکھڑی کے قریبی رشتہ دار ہیں اور تحریک انصاف میں باضابطہ طورپر شامل ہوگئے جبکہ دوسری طرف قادر پورراں میں تحریک انصاف کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی نے مسلم لیگ ن کے ایم پی اے ملک مظہر عباس راں کے گھر آکر باقاعدہ تحریک انصاف میں شمولیت کی دعوت دی۔ مظہرعباس راں نے دعوت کو قبول کرتے ہوئے دو روز میں تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کی موجودگی میں بنی گالہ میں باقاعدہ تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کریں گے۔

مزیدخبریں