معاون خصوصی برائے احتساب نے بے نامی اکاﺅنٹس والوں کیلئے خطرے کی گھنٹی بجادی

معاون خصوصی برائے احتساب نے بے نامی اکاﺅنٹس والوں کیلئے خطرے کی گھنٹی بجادی
معاون خصوصی برائے احتساب نے بے نامی اکاﺅنٹس والوں کیلئے خطرے کی گھنٹی بجادی

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب مرزا شہزاد اکبرنے کہاہے کہ ٹیکس ڈیپارٹمنٹ کو اختیار دیا گیا کہ بے نامی اکاﺅنٹس ضبط کئے جاسکتے ہیں۔

جیونیوز کے پروگرام ”آج شاہ زیب خانزادہ کےساتھ“میں گفتگو کرتے ہوئے شہزاد اکبر نے کہا کہ ایسٹ ریکوری کا کام ختم نہیں ہوا بلکہ زیادہ تیز ی سے ہوگا ،نائیجیریا اور دیگر ممالک کی مثال سامنے رکھ کر پیسہ اور جائیدادیں واپس لیکر آئینگے جو کیش ڈکلیئرہونا ہے، وہ بینک اکاونٹ کے تحت ڈکلیئر ہوگاجو جائیدادیں باہر ہیں اوران پر منی لانڈرنگ کا کیس نہیں ہے وہ سکیم میں شامل ہوسکتی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ٹیکس ڈیپارٹمنٹ کو اختیار دیا گیا کہ بے نامی اکاﺅنٹس ضبط کئے جاسکتے ہیں، بے نامی ایکٹ 2017 سے نافذ ہے۔ ان کا کہناتھا کہ ایمنسٹی اسکیم کے پیچھے یہ منطق تھی کی گرے اکنامی کو قانونی کے دائرے میں لایا جاسکے ۔

مزید : قومی