پرائیویٹ سکول فیڈریشن کا یکم جون کو تعلیمی سرگرمیاں بحال کرنیکا اعلان

  پرائیویٹ سکول فیڈریشن کا یکم جون کو تعلیمی سرگرمیاں بحال کرنیکا اعلان

  

لاہور (لیڈی رپورٹر)پنجاب کے نو تعلیمی بورڈ زکے چئیرمینوں کے اجلاس میں گیا ہوریں،با رہو ریں کے امتحا نا ت سمیت دیگر پرمو شنز کے حوالے سے تجا ویز پیش کر دی گئی ہیں۔جبکہ دوسری جانب یکم جون کونجی سکول کھلیں گے یا نہیں گتھی سلجھ نہ سکی۔ نجی سکولوں کی تنظیم کے ایک دھڑے آل پاکستان پرائیویٹ سکولز فیڈریشن کا یکم جون سے تعلیمی ادارے کھو لنے کا اعلان کردیاجس پر صورتحا ل مذید گھمبیر ہو گئی اور حکو متی حلقوں میں بھی اس پر تشویش کا اظہا ر کیا جا نے لگا۔ بچو ں کے اگلے سال میں پرو موشنز کے حوالے سے ان تجا ویز میں دسویں کے امتحانات کی مارکنگ جبکہ دسویں اور بارہویں کے امتحانات اگلے سال کمپوزٹ لینے کی بھی تجویز ہے اس کے ساتھ ساتھ انٹرمیڈیٹ پارٹ ٹو کے امتحانات کے لیے مختلف تجاویز تیار کی گئی ہیں کہ طلبہ کو گیاہوریں اور انٹری ٹیسٹ کے نمبروں پر میڈیکل اور انجینئرنگ میں داخلے دیے جائیں۔ اگلے سال دسویں اور 12ویں کے کمپوزٹ امتحانات منعقد کرنے کی تجویز بھی ہے تاہم جن بچوں نے اس سال سپلمنٹری امتحانات میں شرکت کرنی تھی ان میں دو مضامین میں فیل طلبہ کو گریس مارکس دے کر پاس کر دینے کی تجویز بھی ہے۔جبکہ دوسری جانب آل پاکستان پرائیویٹ سکول فیڈریشن نے یکم جون سے کام کرنے کا اعلان کر دیا۔دوسرے دھڑے آل پاکستان مینجمنٹ سکول ایسوسی ایشن نے محتاط رہنے کا اعلان کردیا،آل پاکستان پرائیویٹ سکول فیڈریشن نے یکم جون کو سکول کھولنے کا اعلان کردیا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ایس او پیز کے ساتھ یکم جون کو سکول کھولیں گے، چھٹیاں جاری رہیں تو20 فیصد سے زائد سکول بند ہونے کا خدشہ ہے۔ دوسری جانب آل پاکستان پرائیویٹ سکول مینجمنٹ نے موقف اختیار کیا کہ بچوں کی صحت اولین ترجیح ہونی چاہئے، حکومت امدادی پیکیج کا اعلان کرے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -