چلڈرن کمپلیکس‘ تنخواہیں نہ ملنے پر 100سے زائد سکیورٹی گارڈز کا احتجاج

  چلڈرن کمپلیکس‘ تنخواہیں نہ ملنے پر 100سے زائد سکیورٹی گارڈز کا احتجاج

  

ملتان(نمائندہ خصوصی)چلڈرن ہسپتال ملتان میں سیکورٹی کی ڈیوٹی سر انجام رہنے والے 100سے زائد پرائیویٹ سیکورٹی گارڈز3ماہ سے تنخواہ کے منتظر،تنخواہیں نہ ملنے پر گارڈز کا ہسپتال کے گیٹ بند کر کے احتجاج، لواحقین کو مشکلات کا سامنا،نجی کمپنی نے تنخواہیں جاری نہیں کی ہسپتال انتظامیہ کا موقف تفصیل کے مطابق چلڈرن ہسپتال ملتان پرائیویٹ سیکورٹی گارڈ کمپنی کے 100سے زائد سیکورٹی گارڈ جن میں 25خواتین ملازمین بھی شامل ہیں نجی سیکورٹی کمپنی (بقیہ نمبر41صفحہ7پر)

سے 3ماہ کی تنخواہیں نا ملنے سے مشکلات کا شکار ہیں۔ اس حوالے سے گارڈز نے بدھ کی دوپہر چلڈرن کمپلیکس کے مرکزی دروازے کو بند کر کے ہسپتال کے باہر بھرپور احتجاجی مظاہرہ کیا،گارڈز کا کہنا تھا کہ گزشتہ 3ماہ سے تنخواہ بالکل ادا نہیں کی جا رہی،زندگی کیمعاملات چلانے میں نہایت دشواری کا سامنا ہے حتی کہ گھر کا چولہا چلانا مشکل ہوگیا ہے،ادھر احتجاج کے باعث لواحقین کو شدید مشکلات کا سامنا رہا،جبکہ چلڈرن ہسپتال کے ترجمان کا کہنا تھا کہ سیکورٹی ٹھیکیدار 2ماہ کا بل لے چکا ہے ان کی تنخواہ بھی اس نے ادا کرناہوتی ہے یہ ٹھیکیدار کا معاملہ ہے،ادھر سیکورٹی گارڈز نے ٹھیکیدار کے خلاف حکام بالا سے ایکشن لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

سکیورٹی گارڈ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -