جندول، لاک ڈاؤن میں نرمی کے بعدد کانداروں کی چاندی

جندول، لاک ڈاؤن میں نرمی کے بعدد کانداروں کی چاندی

  

جندول(نمائندہ پاکستان)جندول سمیت لوئر دیر میں لاک ڈون کے بعد حجام،ٹیلران،کپڑے سوٹ سمیت شوز کے دوکانداروں نے عوام کو دونوں ہاتھوں سے کھلی عام لوٹنا شروع کردیا،حجام ایک حجامت کا دوسو روپے ٹیلران حضرات چھوٹا سوٹ بنانے کا چار سے500 روپے اور بڑا سوٹ 700 روپے سے لیکر 900لیتے ہے جبکہ کپڑا اور سوٹ سمیت شوز کے دوکانداروں کا تو راج قائم ہے کپڑے کا پانچ سوکا سوٹ بارا سو پر فروخت کیا جارا ہاہے جبکہ شوز اور چپل میکرز نے تو مہنگائی کا سارے باڈریں کراس کردیا ہے بچوں کا چھوٹا جوڑا چپل 200پے کے بجائے 700سو روپے پر اور بڑا جوڑا 1000 ہزار سے لیکر 25 سو تک نارمل جوڑے پروخت ہورہا ہے جس کے وجہ سے مقامی لوگ حد سے زیادہ پریشان رہتے ہے۔مقامی لوگوں نے میڈیا کو بتایا کہ پٹرول اور ڈیزل سستہ ہونے کے باجود مہنگائی بڑتے جارہی ہے جس سے مزدور طبقہ خوار اور پریشانی میں مبتلا ہے مقامی لوگوں نے مزید کہا کہ جب سے تحریک انصاف کا حکومت قائم ہوگیا ہے تو اس دن سے ملک بھر سمیت جندل کے عوام سیکڑوں پریشانیوں سے دوچار رہتے ہیں مقامی لوگوں نے اعلی اھکام سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ جتنا جلدی ہوسکتا ہے حجام،ٹیلران،کپڑے سوٹ اور شوز کے دوکانداروں کو سرکاری نرخنامے جاری کریں تکہ غریب لوگ بھی اپنے بچوں عید کیلئے کپڑے وغیرہ خرید سکے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -