گندم کے ٹرانسپورٹ چارجز میں اضافہ، آٹا مزید مہنگا ہونے کا امکان 

گندم کے ٹرانسپورٹ چارجز میں اضافہ، آٹا مزید مہنگا ہونے کا امکان 

  

 لاہور (لیڈی رپورٹر)محکمہ خوراک پنجاب نے گندم کی منتقلی پر مزید چارجز عائد کردیئے ہیں جس کے بعد آٹا مزید مہنگا ہو نے کا امکا ن ،گندم کا سرکاری ریٹ20روپے اضافہ کے بعد  2220 روپے ہوگیا،جبکہ اوپن مارکیٹ میں نرخ 2360 روپے تک جا پہنچے۔ تفصیلا ت  کے مطا بق لاہور سمیت صوبہ بھر میں گندم ٹرانسپورٹیشن کا ریٹ 20 روپے بڑھا دیا گیا۔ محکمہ خوراک اور پاسکو کے گندم ٹرانسپورٹیشن کے ریٹس میں بھی فرق آگیا۔ فلور ملز مارکیٹ سے 50 روپے اضافے سے 2370 روپے من میں خرید رہی ہیں۔ گندم کی قیمت بڑھنے سے آٹے کی فی کلو قیمت میں 2 روپے اضافے کا امکان، سرکاری گندم کی 100 کلو بوری کے ریٹ پر 51 روپے اضافہ کر دیا گیا۔اضافے کے بعد ٹرانسپورٹیشن چارجز 9 روپے سے بڑھا کر 60 کر دیے گئے ایک من پر ٹرانسپورٹیشن چارجز میں 20 روپے فی فن اضافہ کیا گیا۔پاسکو نے 100 کلو کی بوری پر ٹرانسپورٹیشن چارجز بڑھا کر 130 روپے کر دئیے پاسکو کی جانب سے اڑھائی من کی بوری پر ٹرانسپورٹیشن چارجز 60 روپے بڑھائے۔ لاہور میں اس وقت 75 سے لے کر 80 فلور ملیں فعال ہیں۔متعدد سٹورز پر آٹا 66 روپے کے بجائے 68 روپے کلو میں فروخت ہونے لگا۔ ٹرانسپورٹیشن چارجز میں اضافے کے بعد آٹا 70 روپے کلو ہونے کا امکان ہے۔ مختلف سٹورز مالکان نے پہلے ہی مکس آٹا از خود مہنگا کرکے 80 روپے کلو کر دیا ہے۔

آٹا مہنگا

مزید :

صفحہ آخر -