پی ٹی آئی سیالکوٹ جلسہ کیخلاف درخواست پر ڈی سی کو معاملہ پر فیصلے کا حکم

 پی ٹی آئی سیالکوٹ جلسہ کیخلاف درخواست پر ڈی سی کو معاملہ پر فیصلے کا حکم

  

 لاہور(نامہ نگار)لاہور ہائی کورٹ کے مسٹرجسٹس عابدعزیز شیخ نے ن تحریک انصاف کے 14 مئی کو سیالکوٹ میں نجی تعلیمی ادارے کی جگہ پر جلسہ کرنے کے خلاف دائردرخواست پر ڈپٹی کمشنر کو معاملہ کا جائزہ لے کر فیصلہ کرنے کاحکم دیدیا عدالت نے درخواست گزار کو فوری طور پرڈپٹی کمشنر سے رجوع کرنے اور ڈپٹی کمشنر کو قانون کے مطابق فیصلہ کرنے کی ہدایت بھی کی  دوران سماعت پنجاب حکومت کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ حکومت نے پی ٹی آئی کو جلسے کا این او سی جاری نہیں کیا ڈی سی سیالکوٹ نے پی ٹی آئی کو پریسبیٹرین تعلیمی بورڈ کی گراؤنڈ پر جلسہ کرنے کی ہرگز اجازت نہیں دی، درخواست گزار پریسبیٹرین تعلیمی بورڈ کے سمسن جیکب کی طرف سے بورڈ کی اراضی پر جلسہ کرنے کے اقدام کو چیلنج کیا گیاتھا، درخواست گزار کے وکیل کا موقف تھا کہ نشاندہی کی کہ تحریک انصاف نجی پراپرٹی پر جلسہ کر رہی ہے پنجاب حکومت اور ضلعی انتظامیہ کو درخواست گزار کی زمین جلسے کیلئے دینے کا قانونی اختیار نہیں،وکیل نے خدشہ ظاہر کیا کہ تحریک انصاف کے جلسہ سے اقلیتی تعلیمی بورڈ کی پرائیویسی متاثر ہوگی بلکہ نقصان ہو گا، وکیل نے یہ اعتراض بھی اٹھایا کہ تحریک انصاف کو اگر قانونی طور نہ روکا گیا تو پھر مستقبل میں دیگر سیاسی جماعتیں درخواست گزار کی زمین پر جلسے کریں گی،عدالت سے استدعاہے کہ پی ٹی آئی کو درخواست گزار تعلیمی بورڈ کی اراضی پر جلسہ کرنے سے روکا جائے۔

سیالکوٹ جلسہ 

مزید :

صفحہ آخر -