اومیکرون کے باعث خلیجی ممالک سے آنیوالے مسافروں کی سکریننگ کا فیصلہ

   اومیکرون کے باعث خلیجی ممالک سے آنیوالے مسافروں کی سکریننگ کا فیصلہ

  

 اسلام آباد (این این آئی)پاکستان میں حال ہی میں اومیکرون کی نئی قسم کی پہلے کیس کی نشاندہی کے بعد خلیجی ممالک اور سعودی عرب سے آنے والے ہوائی مسافروں کی اسکریننگ کا فیصلہ کیا گیا ہے۔سول ایوی ایشن حکام کے مطابق وزارت صحت کی ہدایات کے بعد عرب ممالک سے آنے والے مسافروں کا ریپڈ اینٹیجن ٹیسٹ (آر اے ٹی) کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ریپڈ اینٹیجن ٹیسٹ کے ذریعے محدود رینڈم اسکریننگ کا عمل رات بارہ بجے سے اسلام آباد، لاہور اور کراچی ایئرپورٹس پر نافذ العمل ہوا ابتدا میں 150 افراد تک کے حامل چھوٹے جہازوں کے مسافروں میں سے 10 سے 15 مسافروں کے(آر اے ٹی) ٹیسٹ ہوں گے۔ 250 یا اس سے زائد مسافروں کے حامل بڑے جہازوں کی صورت میں 15 سے 20 مسافروں کے ریپڈ ٹیسٹ ہوں گے۔ 

اومیکرون 

مزید :

صفحہ اول -