ریپلیکن سینیٹرر نیڈپال کا اعتراض ، یوکرین کیلئے امدادی پیکیج کی منظوری تعطل کا شکار 

ریپلیکن سینیٹرر نیڈپال کا اعتراض ، یوکرین کیلئے امدادی پیکیج کی منظوری تعطل ...

  

      واشنگٹن (اظہر زمان، خصوصی رپورٹ) ریپیلکن سینیٹر رنیڈپال نے اعتراض اٹھا کر یوکرین کےلئے 42ارب ڈالر کے امدادی پیکیج کو بلاک کردیا ۔امدادی بل پر بحث کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یوکرین کو بچانے کےلئے امریکی معیشت کو تباہ نہیں کرسکتے، صدر جوہائیڈن کی خواہش کے مطابق ڈیموکرئٹس اور ریپیلکن پارٹیاں یوکرین کو مدد دینے پر متفق گئی تھیں، تاہم واحد ریپیلکن سینیٹر کے اعتراض کے باعث رولز کے مطابق اس کی منظوری تعطل کا شکار ہوگئی ہے اور کم از کم ایک ہفتے تک اس پر مزید بحث نہیں ہوسکتی ۔ سینیٹر ر ینڈ پا ل نے سینیٹ میں شدید نکتہ چینی کے باوجود اپنا موقف تبدیل نہیں کیا، انکا کہنا تھا کہ میں نے اپنے عہدے کا حلف کسی غیر ملک کی بجائے امریکی آئین کے تحت اٹھایا ہے، انہوں نے کہا کہ مجھے یوکرین سے پوری ہمدردی ہے، لیکن میں اس کو مسلسل امداد دینے کے حق میں نہیں ہوں، کیونکہ ہمارے پاس مزید رقم نہیں ہے، اگر ایسا کیا تو ہماری اپنی معیشت تباہ ہوجائے گی، جس سے ہماری قومی سلامتی خطرے میں پڑ جائے گی ۔ یادرہے اس بل کو گذشتہ ہفتے امریکی ایوان نمائندگان نے کثرت رائے سے منظور کیا تھا۔ 

 سینیٹر رنیڈپال

مزید :

صفحہ اول -