عمران خان خانہ جنگی کرانے کی  کوشش کر رہے ہیں،جاوید لطیف 

     عمران خان خانہ جنگی کرانے کی  کوشش کر رہے ہیں،جاوید لطیف 

  

لاہور (این این آئی) وفاقی وزیر جاوید لطیف نے کہاہے کہ عمران خان ملک کی سلامتی کیلئے خطرہ ہے، وہ ملک میں خانہ جنگی کرانے کی کوشش کر رہے ہیں اور چاہتے ہیں کہ اداروں کو بلیک میل کیا جائے تاکہ ان کو دوبارہ اقتدار میں لایا جائے،جلسہ، جلسہ کھیلنے سے ملک کے اندر تبدیلی نہیں آ سکتی،ہم نے آئینی طریقے سے عمران خان کی حکومت ختم کی،لانگ مارچ صرف بڑھکیں ہیں، کنٹینر پر کھڑا ہونے کا وقت چلا گیا،پچھلی حکومت کے اسکینڈلز پر کام ہو رہا ہے، ثبوت اکٹھے کیے جا رہے ہیں، ہم روزانہ ثبوتوں کیساتھ پریس کانفرنس کریں گے، ہم ملک کو فساد سے بچانے کیلئے حکمت سے کام لے رہے ہیں۔جاوید لطیف نے پریس کلب میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے آئینی طریقے سے عمران خان کی حکومت ختم کی، اگرآپ چاہتے ہیں کہ فرح بی بی کیخلاف تحقیقات رک جائیں تو یہ نہیں ہو سکتا۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کا مقصد اداروں کو کمزور کرنا ہے، آج ادارے میں بیٹھے لوگ اپنی آئینی حدود میں رہ کر کام کر رہے ہیں، ملک کا تشخص خراب کرنے کی اجازت نہیں دی جا سکتی۔میاں جاوید لطیف نے کہا کہ جلسہ، جلسہ کھیلنے سے ملک کے اندر تبدیلی نہیں آ سکتی،ہم نے آئینی طریقے سے عمران خان کی حکومت ختم کی۔انہوں نے کہاکہ اگر عمران خان نے قانون ہاتھ میں لیا تو قانون ان کا استقبال کرنے کیلئے موجود ہوگا، لانگ مارچ صرف بڑھکیں ہیں، کنٹینر پر کھڑا ہونے کا وقت چلا گیا۔جاوید لطیف کا کہنا تھا کہ پچھلی حکومت کے اسکینڈلز پر کام ہو رہا ہے، ثبوت اکٹھے کیے جا رہے ہیں، ہم روزانہ ثبوتوں کیساتھ پریس کانفرنس کریں گے، ہم ملک کو فساد سے بچانے کیلئے حکمت سے کام لے رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ عمرانی فتنہ پاکستانی معیشت کو ڈبونے کے بعد اس کا جنازہ نکالنے کا سفر جاری رکھنا چاہتا ہے،یہ 20 سالوں سے پاکستان میں فساد برپا کرنا چاہتا ہے،اس کا عملی مظاہرہ اس نے 2014 میں شروع کیا اور اداروں میں بیٹھے افراد کو دباو میں لانے میں کامیاب بھی رہا،آج اس نے پاکستان میں خانہ جنگی کی کوشش شروع کر رکھی ہے،یہ قوم کو مذہبی دیوالیے کی جانب لے جا رہا ہے،اس کی اپنی گفتگو اور اس کی کابینہ کے لوگ مذہب کے حوالے سے جو گفتگو کر رہے ہیں یہ اصل میں آگ سے کھیل رہا ہے،اس کی خواہش ہے کہ معیشت، اداروں کو اس قدر کمزور کر دیا جائے کہ ادارے اسے دوبارہ اقتدار میں لے آئیں،لیکن آج ملکی ادارے اور اس میں بیٹھے افراد اپنی حدود میں رہنا چاہتے ہیں،اس کی وجہ سے ایٹمی پاکستان کا دنیا میں کیا تشخص ہو گا،یہ پاکستان کا خیرخواہ کیسے ہو سکتا ہے۔انہوں نے کہاکہ ہم الیکشن سے بھاگنے والے نہیں ہیں۔

جاوید لطیف 

مزید :

صفحہ اول -