سندھ ہائیکورٹ نے بلدیاتی انتخابات روکنے کی استدعا مسترد کردی

    سندھ ہائیکورٹ نے بلدیاتی انتخابات روکنے کی استدعا مسترد کردی

  

کراچی (سٹاف رپورٹر)سندھ ہائی کورٹ نے بلدیاتی انتخابات بلدیاتی انتخابات روکنے کی حکم امتناع اور نوٹیفیکیشن معطل کرنے کی استدعا مسترد کردی۔سندھ ہائیکورٹ میں حلیم عادل شیخ کی جانب سے سندھ میں ہونے والے بلدیاتی انتخابات روکنے کے لیئے دائر درخواست پر سماعت ہوئی۔تحریری جواب جمع نہ کرنے پر عدالت نے سندھ حکومت اور الیکشن کمیشن پر غصے کا اظہار کیا۔ الیکشن کمیشن نے بتایا کہ نوٹس کی کاپی تاخیر سے ملی اس کیے جواب تیار کرنے میں تاخیر ہوئی۔درخواست گزار کے وکیل نے کہا کہ جب تک الیکشن کمیشن اور حکومت سندھ کا تحریری جواب جمع نہیں جمع ہوتا تب تک نوٹیفکیشن معطل کیا جائے۔چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ نے کہا کہ معذرت! ہم بلدیاتی انتخابات روک نہیں سکتے ہیں۔ اس طرح ہم انتخابات کیسے روک دیں؟جی ڈی اے کے وکیل نے کہا کہ سپریم کورٹ کے حکم کے خلاف انتخابات ہو رہے ہیں۔ بلدیاتی انتخابات ہوگئے تو کس قانون کے تحت وہں گے۔عدالت نے سندھ حکومت اور الیکشن کمیشن کو تنبیہ کی ہے کہ آخری مہلت دے رہے ہیں۔ سندھ ہائیکورٹ نے فوری حکم امتناع دینے سے انکار کردیا۔ انتخابی شیڈیول کا نوٹیفکیشن معطل کرنے کی استدعا بھی مسترد کرتے ہوئے مزید سماعت 24 مئی تک ملتوی کر دی۔

مزید :

صفحہ اول -