ہاؤسنگ کالونیاں بناکر لوٹ مار،گواہوں کی طرف سے ملزمان سے تصفیہ کیلئے مہلت طلب، کیس کی سماعت ملتوی

ہاؤسنگ کالونیاں بناکر لوٹ مار،گواہوں کی طرف سے ملزمان سے تصفیہ کیلئے مہلت ...

  

ملتان (خصو صی  رپورٹر)احتساب عدالت ملتان نے غیر قانونی طور پر ہاسنگ کالونیاں بنا کر مبینہ طور پر شہریوں سے فراڈ کرنے کے ریفرنس میں ملوث علی ایسوسی ایٹ (بقیہ نمبر18صفحہ6پر)

کے مینجنگ ڈائریکٹر ملزم شیخ شاہد جمال سمیت دیگر کے خلاف فالکن سٹی ریفرنس میں گواہوں اسلم اور بشیر نے ملزمان سے تصفیہ کے لیے مہلت طلب کی جس پر سماعت یکم جون تک ملتوی کردی گئی، اسی طرح القریش ریفرنس میں دو گواہوں کے بیانات قلمبند کیے گئے گواہ اکمل سے متعلق رپورٹ پیش کی گئی، گرین فورٹ ریفرنس میں گواہ خالد ظفر اور عابد حسین پیش نہیں ہوئے جبکہ دو گواہوں کے بیانات قلمبند کیے گئے، ملزم حافظ نیاز کی بریت کی درخواست پر بحث ہوئی، پروفیسر بلاک ریفرنس میں دو گواہوں کی شہادتیں قلمبند کرتے ہوئے مزید شہادت کے لیے مذکورہ تمام ریفرنسز پر سماعت 2 جون  تک ملتوی کرنے کا حکم دیا ہے۔ دوسری جانب مجتبی کینال ریفرنس میں 4 گواہ پیش ہوئے جبکہ شہادت نہ ہوئی، ایک گواہ کا نیب کو دیا گئے بیان میں تضاد تھا جس پر پراسیکوٹر نے مہلت کی استدعا کی جس پر سماعت 9 جون تک سماعت ملتوی کردی ہے۔ مزکورہ ملزمان سمیت دیگر ملزمان کے خلاف 7 مختلف ریفرنس زیر سماعت ہیں۔ قبل ازیں فاضل عدالت میں نیب کے مطابق علی ایسوسی ایٹ کے ڈائریکٹر شاہد جمال کے خلاف غیر قانونی کالونیاں بنا کر شہریوں سے فراڈ کرنے کا الزام ہے، ملزم نے مبینہ طور پر گرین فورٹ، فالکن سٹی، ملینیم سٹی، بابر ٹان، گرین فورٹ پلس، مجتبی کیناک اور القریش کے نام سے کالونیاں بنا کر شہریوں سے کروڑوں روپے کا فراڈ کیا ہے، غیر قانونی کالونیاں بنا کر عرصہ دراز سے شہریوں کو سہولیات فراہم نہیں کی گئیں۔ ملزم کا تفتیش اور رقم کی برآمدگی کے لیے جسمانی اور جوڈیشل ریمانڈ منظور ہوا تھا ملزم کو دیگر کیسز میں تفتیش کے لیے جیل سے تحویل بھی لیا جاچکا ہے۔ تاہم ریفرنس پر سماعت ملتوی کردی گئی ہے۔ ملزم کا موقف ہے ان پر لگائے گئے الزامات غلط ہیں کسی اور کا فراڈ ان پر عائد کردیا گیا ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -