پر تشدد مظاہرے اور صوابی انٹرچینج میں توڑ پھوڑ،پی ٹی آئی رہنماؤں کیخلاف مقدمات درج

پر تشدد مظاہرے اور صوابی انٹرچینج میں توڑ پھوڑ،پی ٹی آئی رہنماؤں کیخلاف ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


     صوابی (بیورورپورٹ) گزشتہ روز پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان کی گرفتاری پر کارکنوں کی جانب سے ہونے والے  کے دوران صوابی انٹرچینج چینج پر واقع دونوں ٹول پلازوں میں توڑ پھوڑ۔ سی ٹی  ٹی کیمرے۔ کمپیوٹرز دیگر الات۔سرکاری املاک کو نقصان پہنچانے کے علاوہ اسے آگ لگا کر خاکستر کرنے اور پشاور اسلام آباد موٹر وے بند کرنے پر تھانہ لاہور میں درج  ایف آئی آر میں دھشت گردی کی دفعات شامل کردی گئی۔ذرائع نے بتایا کہ آیف آئی آر میں سابق سپیکر اسد قیصر۔ان کے سابق ایم پی اے بھائی عاقب اللہ دیگر سابق ایم پی ایز عبد الکریم۔ حاجی رنگیز احمد۔ سابق صوبائی وزیر تعلیم شہرام خان ترکئی کے بھائی فیصل خان ترکئی۔ ضلعی صدر سہیل خان یوسفزئی و دیگر عہدیداروں سمیت 52 کارکنان نامزد جبکہ 200سے تین سو تک نامعلوم کارکنان شامل پولیس ہیں تفتیش کے بعد آیف آئی آر میں انسداد دہشت گردی کا دفعہ 7ata شامل کی گئی۔پولیس ترجمان کے مطابق پی ٹی آئی کے 65 کارکن تین ایم پی او جبکہ سولہ دیگر دفعات کے تحت گرفتار کئے جا چکے ہیں۔