صرف پیٹ پر چربی صحت کیلئے زیادہ خطرناک ہے یا پورے جسم پر موٹاپہ؟ ماہرین کا ایسا انکشاف کہ ہمارے تمام خیالات غلط ثابت کردئیے

صرف پیٹ پر چربی صحت کیلئے زیادہ خطرناک ہے یا پورے جسم پر موٹاپہ؟ ماہرین کا ...
صرف پیٹ پر چربی صحت کیلئے زیادہ خطرناک ہے یا پورے جسم پر موٹاپہ؟ ماہرین کا ایسا انکشاف کہ ہمارے تمام خیالات غلط ثابت کردئیے

  


واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) متعدد تحقیقاتی رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ موٹاپا صحت کا دشمن ہے اور اس سے انسان جلدی موت کے منہ میں چلا جاتا ہے۔ ماہرین نے ایک نئی تحقیق میں انکشاف کیا ہے کہ پیٹ پر چربی کا بڑھنا پورے جسم کے موٹاپے سے زیادہ خطرناک ہوتا ہے اور جن لوگوں کے پیٹ پر ان کے باقی جسم کی نسبت زیادہ چربی ہوتی ہے اور ان کی توند بڑی ہوجاتی ہے ان میں موٹاپے کے مریضوں کی نسبت جلدی موت کے منہ میں جانے کا امکان دوگنا ہو جاتا ہے۔

مزید پڑھیں: وہ ایک کام جب آپ کو پیشاب آرہا ہو تو زیادہ بہتر انداز میں کرسکتے ہیں، تحقیق میں ایسا انکشاف کہ سب حیران رہ گئے

امریکی ریاست منیسوٹا میں قائم میو کلینک کے ماہرین کی تحقیقاتی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ٹانگوں اور کولہے پر چربی کے ریشوں کا بننا گلوکوز کے توانائی میں بدلنے میں معاون ثابت ہو سکتا ہے مگر پیٹ پر چربی کا اکٹھا ہونا اس عمل کو درہم برہم کر دیتا ہے جس سے انسان دوران خون اور دل کی بیماریوں میں مبتلا ہو جاتا ہے۔میو کلینک کے کارڈیالوجسٹ ڈاکٹر فرانسسکو لوپز کا کہنا ہے کہ پورے جسم کا موٹاپا براہ راست دل کو متاثر کرتا ہے مگر جسم کے درمیانی حصے (پیٹ) کا موٹاپا اس سے دوگنا زیادہ نظام دوران خون کو متاثر کرتا ہے اور دل کی بیماریوں کا باعث بنتاہے۔

مزید : تعلیم و صحت


loading...