پی سی بی نے بھارت کی میزبانی میں سیریز کھیلنے کی پیش کش ٹھکرا دی ، دورہ حکومتی اجازت سے مشروط،بھارت آدھا ریونیو بھی دینے پر رضامند

پی سی بی نے بھارت کی میزبانی میں سیریز کھیلنے کی پیش کش ٹھکرا دی ، دورہ حکومتی ...
پی سی بی نے بھارت کی میزبانی میں سیریز کھیلنے کی پیش کش ٹھکرا دی ، دورہ حکومتی اجازت سے مشروط،بھارت آدھا ریونیو بھی دینے پر رضامند

  


لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک )پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی )نے بھارتی کرکٹ بورڈ کی بھارت میں ان کی میزبانی میں سیریز کھیلنے کی پیش کش ٹھکرا دی ہے اور بال حکومت کے کورٹ میں ڈال دی ہے ۔ بی سی سی آئی حکام نے آج پی سی بی سے ٹیلفونک رابطہ کیا اوربھارت میں مختصر سیریز کے لئے ان کی میزبانی میں کھیلنے کی آفر کی ۔ بھارتی کرکٹ بورڈ نے کہا ہے کہ بھارت میں پاکستان کرکٹ ٹیم کی مختصر سیریز کی میزبانی کے لئے تیار ہیں۔چیئرمین پی سی بی شہریار خان نے بھارت میں کھیلنے کی پیش کش ٹھکرا دی ہے ۔پریس کانفرنس کے دوران انہوں نے کہاہےے کہ بھارت میں حالات پاکستانی ٹیم کے وہاں کھیلنے کے حق میں نہیں ، کوئی پاکستانی جائے تو شیو سینا اور دیگر انتہا پسند ہندو ناروا سلوک شروع کر دیتے ہیں ایسے میں پاکستانی ٹیم کیسے بھارت بھیج سکتے ہیں ۔

چیئرمین پی سی بی شہریار خان نے دورہ حکومتی اجازت سے مشروط کرتے ہوئے کہا کہ اپنی ٹیم بھارت نہیں بھیجیں گے ،بھارت میں جا کر کھیلنا میری سمجھ سے بالاتر ہے ۔ انہوں نے کہا کہ منگل کو بورڈ آف گورنرز کے اجلاس میں غور کرینگے،ہم حکومت سے پوچھ کر جواب دینگے۔ انہوں نے کہا کہ تحریری معاہدے تک کسی بات پر کچھ نہیں کہہ سکتے ،تحریری جواب سے پتہ چلے گا کہ ششانک منوہر واقعی سیریز کا انعقاد چاہتے ہیں یا نہیں۔شہریار خان نے کہا کہ بھارت میں سیریز سے پی سی بی کا بہت نقصان ہو گا بھارت میں ہمارے لئے سکیورٹی ایشو بھی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم بھارت میں جا کر دومرتبہ کھیل چکے ہیں اب بھارت کو یہاں آنا چاہیے ہم وہاں نہیں جائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ عمر اکمل کا فیصلہ تمام رپورٹس کے بعد ہو گا اگر بے گناہ ہوں گے سزا نہیں ہو گی اگر انہوں نے کوئی خلاف ورزی کی ہو گی تو خمیازہ بھگتنا ہو گا ۔ ذرائع نے بتایا کہ بھارتی کرکٹ بورڈ نے یہ آفر ون ڈے اور ٹی ٹونٹی کے لئے کی ہے جبکہ وہ پاکستان کو 50فیصد ریونیو دینے کو بھی تیار ہے ۔واضح رہے کہ 2011-12میں ہونے والی پاک بھارت کرکٹ سیریز میں بھارت کو 50ملین ڈالر سے زائد آمدنی اکٹھی ہوئی تھی جبکہ اب اگر پاک بھارت ون ڈے اور ٹی ٹونٹی سیریز ہوتی ہے تو بھارت کو 100ملین ڈالر سے زائد آمدنی ہو سکتی ہے ۔

مزید : کھیل /اہم خبریں


loading...