موبائل فون پر بینک اکاؤنٹس تک رسائی نوسرباز متحرک متعلقہ ادارے خاموش تماشائی

موبائل فون پر بینک اکاؤنٹس تک رسائی نوسرباز متحرک متعلقہ ادارے خاموش تماشائی

منٹھار(نامہ نگار)بق ملک بھر میں سائبر کرائم میں تشویشناک اضافہ دیکھنے میں آ رہا ہے جبکہ متعلقہ ادارے اس سلسلہ میں خاموشی اختیار کئے ہوئے ہیں،منٹھار ٹاؤن و نواح میں بھی آفیسر بن کرلوگوں کو فون پر ذاتی معلومات اور بنک اکاؤنٹ،اے ٹی ایم کارڈ کے بارے میں پوچھا جا رہا ہے اسی(بقیہ نمبر45صفحہ12پر )

طرح بے نظیرانکم سپورٹ پروگرام میں رقم آنے کی اطلاع اور کچھ رقم بھجوانے کا کہا جاتا ہے۔کئی سادہ لوح افراد اپنی رقم گنوا چکے ہیں،اسی طرح چک123 پی کا نوجوان نئی گاڑی قرعہ اندازی میں نکلنے کے جھانسہ میںآتے ہوئے دو لاکھ روپے سے زائد رقم سے ہاتھ دھو بیٹھا۔دلچسپ بات یہ ہے کہ نوسر باز لٹنے والے کو اس بات پر پابند کر دیتے ہیں کہ وہ کسی سے مشورہ نہ کر پائے اور تمام مراحل اچانک اور تیزترین طے کروانے کے بعد اپنا موبائل نمبر بند کر دیتے ہیں،لٹنے والا شرمندگی کے باعث کسی کو بھی اپنی کہانی سنانے سے گریز کرتا ہے یوں فراڈئیے اپنا دھندا جاری رکھے ہوئے ہیں۔اس حوالے سے بنک چک125 پی سے بات ہوئی تو ان کا کہنا تھا کہ اپنی ذاتی معلومات کسی اجنبی کے ساتھ ہرگز شئر نہ کی جائیں خاص طور پر بنک اکاؤنٹ کے حوالہ سے کسی کو بھی اپنی معلومات شئر نہ کریں اگر بنک کی جانب سے بھی فون کال آئے تو خود بنک چل کر متعلقہ آفیسر سے بات چیت کو ترجیح دی جائے تا کہ کسی بھی قسم کی پریشانی سے بچا جا سکے۔ہم ہر نئے دن نئے انداز سے نوسر بازی کی کہانیاں پڑھ رہے ہیں جس سے بچنے کے لئے انتہائی محتاط رویہ اپنانے کی ضرورت ہے۔خود بھی بچئے اور اپنے دوست احباب اور دیگر رشتہ داروں کو بھی ان نوسربازوں سے بچائیں تا کہ خون پسینے سے کی گئی کمائی لٹنے سے بچ سکے۔

وارداتیں

مزید : ملتان صفحہ آخر