لیڈی وارڈن اور کلرک نوکری سے کیوں برطرف ہوئے؟

لیڈی وارڈن اور کلرک نوکری سے کیوں برطرف ہوئے؟
لیڈی وارڈن اور کلرک نوکری سے کیوں برطرف ہوئے؟

  

لاہور (ویب ڈیسک) چیف ٹریفک آفیسر لاہور لیاقت علی ملک نے ناجائز تعلقات ثابت ہونے پر خاتون وارڈن اور جونیئر کلرک کو ملازمت سے برطرف کر دیا۔

روزنامہ جنگ  کے مطابق لاہور میں تعینات ایک لیڈی ٹریفک وارڈن کے جونیئر کلرک کے ساتھ ناجائز تعلقات تھے تاہم بعد میں کلرک کی جانب سے شادی سے انکار کر دیا گیا۔ اس موقع پر لیڈی وارڈن نے کلرک کے خلاف زیادتی کی نیت سے اغواء کرنے کا مقدمہ درج کروایا۔ایس پی ٹریفک آصف صدیق نے واقعے کی انکوائری کی تو دونوں قصور وار نکلے ، جس کے بعد محکمے کی بدنامی کا باعث بننے پر سی ٹی او نے دونوں اہلکاروںکو ملازمت سے برطرف کر دیا۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور