صحت کارڈ کے اجراء کا طریقہ کار درست نہیں،عبدالحمید

  صحت کارڈ کے اجراء کا طریقہ کار درست نہیں،عبدالحمید

  



لاہور(سٹی رپورٹر)حلقہ کے ایم این اے اور وفاقی وزیر حماد اظہر کا اپنے حلقہ میں ٹائم نا دینا ان کے مستقبل کے لیے نقصان کا باعث جبکہ ایم پی اے میاں اسلم اقبال کا حلقہ کے لیے دن رات متحرک رہنا ان کی کامیابی کا منہ بولتا ثبوت ہے یہ بات گزشتہ روز ”پاکستان“فورم میں یو سی76 کے وائس چیئرمین اور پی ٹی آئی کے سینئر کارکن عبدالحمید نے کہی۔انہوں نے کہا کہ عوام نے پی ٹی آئی کے ایم این اے حماد اظہر کو اعتماد کا ووٹ دیا ہے لیکن ان کی اسلام آباد میں مصروفیت کی بنا پر عوام کو کافی مشکلات کا سامنا ہے ۔انہوں نے کہا کہ میں وزیر خزانہ حفیظ شیخ کے بیان کی مذمت کرتا ہوں انہیں تو ہر چیز گھر بیٹھے بٹھائے مل جاتی ہے لیکن اگر وہ عوام سے پوچھیں گے تو ان کو آٹے کا بھاؤ معلوم ہو جائے گا۔انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے صحت کارڈ کے اجراء کا جو طریقہ کار بتایا گیا ہے وہ درست نہیں کیونکہ 2009 تا2011 تک ہونے والے سروے کے مطابق ان کارڈ کا اجراء کیا جا رہا ہے اب ان میں سے کئی افراد ایسے ہیں جو اس دنیا سے کوچ کر چکے ہیں جبکہ کچھ ایسے ہیں جنہیں اب اس کارڈ کی کوئی ضرورت نہیں کیونکہ وہ خود کفیل ہو چکے ہیں اس کے لیے ضروری ہے کہ چند ماہ قبل لگائے گئے زکوۃ کوآزڈینیٹرز سے فائدہ اٹھانا چاہیے جو علاقہ کی صورتحال سے واقف ہیں اور اپنے ایم این اے ایم پی اے کے ماتحت رہتے ہوئے ان کے ذریعے عوام اپنے حلقہ کے نمائندوں سے مستفید ہوتے ہیں۔

اگر ایسا نا کیا گیا تو اس سے نقصان کا اندیشہ ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1