تخت بھائی،رواں سال ڈکیت اور رہزن گروہ گرفتار 9 کروڑ کا مال اور گاڑیاں برآمد

    تخت بھائی،رواں سال ڈکیت اور رہزن گروہ گرفتار 9 کروڑ کا مال اور گاڑیاں ...

  



تخت بھائی(تحصیل رپورٹر) مردان ریجن پولیس نے سال 2019میں 48ڈکیت اور رہزن گروہوں کو گرفتار کر کے انکے قبضے سے 9کروڑ روپے سے زائد مال مسروقہ رقم، 9 گاڑیاں اور 55 موٹر سائیکل برآمد کئے۔ڈی آئی جی مردان محمد علی خان نے تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ مردان ریجن میں قتل،اقدام قتل،ڈکیتی،چوری اوردیگرجرائم میں خاطر خوا کمی آئی ہے۔انہوں نے کہا کہ سال 2019ء میں قتل اور اقدام قتل کے1137 مقدمات کا اندراج ہوا ہے جبکہ سال 2018ء میں یہی تعداد1262 تھی۔ اس سال قتل و اقدام قتل کے کیسوں میں 10فیصد کمی ریکارڈ کی گئی۔ جبکہ اغوا کے 25 واقعات رپورٹ ہوئے جن کی تعداد گزشتہ سال 42 تھی کمی کا تناسب 41فیصد رہا۔ 2019 میں چوری اور نقب زنی کے379 مقدمات درج ہوئے سال 2018ء میں یہی تعداد 523تھی، اسی تعداد کے حساب سے ان واقعات میں 30فیصد کمی آئی۔ اسی طرح 2019 میں گاڑی اور موٹر سائکل چوری کے151 مقدمات درج ہوئے جبکہ سال 2018 میں یہ تعداد 234تھی اسی طرح گاڑیوں اور موٹر سائیکل کی چوری میں 36فیصد کمی آئی۔انہوں نے کہا کہ سال 2019 کے دوران منشیات سمگل کرنے والے بڑے بڑے گروہوں کو حراست میں لے کر نے بڑی مقدار میں منشیات برآمد کئے۔ سال 2019ء میں 231 کلو ہیروئن، 6132 کلوگرام چرس اور 31413.8 گرام آئس برآمد کی گئی ہے۔جبکہ 2018ء میں 101 کلو ہیروئن، 44100 کلوگرام چرس اور 3336 گرام آئس برآمد کی گئی تھی۔ اس سال پکڑی گئی منشیات میں بلترتیب 57، 30اور 89فیصد اضافہ ہوا ہے۔ ڈی آئی جی مردان نے کہا کہ تمام اضلاع کی پولیس ازحد ممکن کوشش کرتے ہوئے اس بات کو یقینی بنانا رہی ہے کہ پولیس کا روایتی امیج لوگوں کے ذہن سے ختم ہو اور عوام کو امن و امان کی صورتحال ازخود بہتر نظر آئے۔ڈی آئی جی مردان نے ریجن کے تمام پولیس افسران کو قتل، اغواء، اغواء برائے تاوان، دہشتگردی، منشیات، گاڑیوں کی چوری اور دیگر جرائم میں ملوث اشتہاری ملزمان کی گرفتاری کے احکامات جاری کئے جس پر کاروائیاں کرتے ہوئے تمام اضلاع میں پولیس کا روپوش اور اشتہاری ملزمان کی گرفتاری کے لئے ایک مکمل جامعہ پلان تیار کیا گیا جس کے تحت ریجن کی پولیس نے سال 2019 میں مختلف مقدمات میں مطلوب عرصہ دراز سے زیر زمین چلے جانے والے 6443 روپوش اور اشتہاری ملزمان کو گرفتار کیا۔ اس موقع پر ڈی آئی جی مردان نے کہا کہ عوام الناس کی جان و مال کا تحفظ ہماری اولین ترجیحات میں شامل ہیں،عوام کی خدمت نہایت خوش اخلاقی اور دوستانہ رویہ اختیار کرتے ہوئے کی جائے،سال 2019 میں مردان چارسدہ، نوشہرہ اور صوابی پولیس کی بہترین کارکردگی اور بڑے پیمانے کی برآمدگی پر ڈی آئی جی مردان نے کہا کے ایماندار اور محنتی پولیس افسران ہ اہلکار ہمارے لیے قابل احترام اور شاباشی کے مستحق ہیں جبکہ ڈیوٹی میں غفلت، سست روی اور کرپشن میں ملوث ہونے پر سخت محکمانہ کاروائی کی جائیگی۔انہوں نے کہا کہ پولیس اسی طرح امن و امان برقرار رکھنے اور جرائم کی بیخ کنی کیلئے انسدادی کاروائیاں بلا امتیاز جاری رکھیں۔ معزز شہریوں کی عزت و آبرو کی لاج رکھی جائے جبکہ جرائم پیشہ اور سماج دشمن عناصر کے خلاف آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر