این آر او کی بات کرنا توہین عدالت، چیف جسٹس ازخود نوٹس لیں،احسن اقبال

  این آر او کی بات کرنا توہین عدالت، چیف جسٹس ازخود نوٹس لیں،احسن اقبال

  



اسلام آباد(آن لائن)مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال نے کہا ہے کہ میں سمجھتا ہوں کہ جب عمران خان کہتے ہیں کہ میں این آر او نہیں دوں گا تو چیف جسٹس کو عمران خان کو سوموٹو کا نوٹس بھیجنا چاہئیے اور ان سے وضاحت طلب کرنی چا ہئے کہ وہ کون سا این آر او ہے جو وہ دے سکتے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال نے کہا کہ عمران خان اور ان کے وزرا نے جو ڈیل کی باتیں کی ہیں اب ان کو توہین عدالت کے نوٹس کا سامنا ہے۔ عمران خان بار بار کہتے ہیں کہ میں این آر او نہیں دوں گا تو اب ذرا عمران خان یہ سمجھا دیں کہ کون سا این آر او ہے جو وہ دے سکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وہ کرپشن کے کیسز جو حکومت نے قائم کئے ہیں، ان کا فیصلہ عمران نیازی نے نہیں بلکہ عدالتوں نے کرنا ہے۔ کیا پاکستان کی عدالتیں عمران نیازی کے تابع ہیں، کیا عدالتیں عمران خان کے کہنے پر فیصلے دیتی ہیں؟۔

احسن اقبال

مزید : پشاورصفحہ آخر