پاکستانی فلموں سے موسیقی نورجہاں کے ساتھ ہی چلی گئی،ترنم ناز

    پاکستانی فلموں سے موسیقی نورجہاں کے ساتھ ہی چلی گئی،ترنم ناز
    پاکستانی فلموں سے موسیقی نورجہاں کے ساتھ ہی چلی گئی،ترنم ناز

  



لاہور(فلم رپورٹر)گلوکارہ ترنّم نازنے کہا ہے کہ پاکستانی فلموں سے موسیقی ملکہ ترنّم نورجہاں کے ساتھ ہی چلی گئی تھی۔ آج کی فلمی موسیقی کا بہت برا حال ہے۔ موسیقاروں کے نام سے بھی کوئی واقف نہیں ہوتا۔ کوئی اگرمیری بات سے ناراض ہوتا ہے توہوجائے۔ ان خیالات کا اظہارانہوں نے کراچی میں موسیقاراعظم ماسٹرغلام حیدرکی یادمیں منعقدہ محفلِ موسیقی سے قبل بات چیت کرتے ہوتے ہوئے کیا۔ترنم نازنے بتایا کہ میں وہ واحد گلوکارہ ہوں، جس نے ملکہ ترنم نورجہاں کی باقاعدہ شاگردی اختیارکی۔ موسیقارماسٹرغلام حیدرنے برصغیر میں کئی بڑی آوازوں کومتعارف کروایا، ان میں سب سے زیادہ مقبولیت میڈم نورجہاں،لتا منگیشکراورشمشاد بیگم کوحاصل ہوئی۔ اب ان جیسے موسیقارنظر نہیں آتے۔ وہ اپنے کام سے عشق کرتے تھے۔ 50برس بعد نورجہاں کی آواز میں گائے ہوئے سدا بہارگیت سماعتوں میں آج بھی رس گھول رہے ہیں۔ترنم نازنے ایک سوال کے جواب میں بتایا کہ پاکستان میں فن کاروں کی قدرنہیں کی جاتی۔

، اس لیے فیملی میں سے کوئی شوبزنس کی طرف نہیں آیا۔ درجنوں فلموں میں آوازکا جادوجگانے والی گلوکارہ ترنم نازنے آرٹس کونسل میں اپنی ا?وازکا جادوجگا کرمحفل میں ماضی کی یادیں تازہ کیں۔ اس موقع پرگلوکارظفررامے، نعمان خان، فضا علی اورعمران جاوید نے بھی مشہورپاکستانی گیت پیش کیے۔ ماسٹرغلام حیدرکے صاحبزادے پرویزحیدر نے احمد شاہ، ڈاکٹر ہما میر سمیت تمام مہمانوں کا شکریہ ادا کیا۔

مزید : کلچر