جیل مینوئل صوبائی معاملہ، نیب آرڈیننس میں ترمیم کو نہیں مانتے، عدالت سے رجوع کرینگے: وزیراعلٰی سندھ 

    جیل مینوئل صوبائی معاملہ، نیب آرڈیننس میں ترمیم کو نہیں مانتے، عدالت سے ...

  



کراچی (آن لائن)وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ جیل مینؤئل صوبائی معاملہ ہے، وفاق اس میں ترمیم نہیں کرسکتا، نیب آرڈیننس میں وفاقی ترمیم کو نہیں مانتے،ہم اس کو عدالت میں چیلنج کریں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کو گاڑیوں سمیت دیگر سامان دینے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت کہتی ہے کہ 18ویں ترمیم کوئی آسمانی صحیفہ نہیں کہ اس کو چیلنج نہ کیا جائے جبکہ میں کہتا ہوں آپ اس میں ترمیم کرکے صوبوں کو مزید اختیار دیں۔وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ ایک اہم شخص نے کہا کہ سندھ حکومت کام نہیں کرتی، آپ کی آنکھیں اگر ہماری کاوش کو نہیں دیکھتی ہیں تو مجھے آپ کے اندھے پن پر افسوس ہے۔مراد علی شاہ نے وفاقی مشیر خزانہ پر طنز کرتے ہوئے کہا کہ اس حکومت کے تحت معیشت نے ترقی کی ہے کہ سبزی منڈی میں ٹماٹر 17 روپے ملنے لگے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے ایک ماہ کی کوشش سے شہر کو صاف کیا‘اس محنت کا فائدہ ہوا جبکہ وفاقی حکومت کراچی کیلئے بہت ساری کمیٹیاں بنا چکی ہے تاہم سندھ حکومت ان کمیٹیوں میں اپنا نمائندہ نہیں بھیجے گی۔انوہں نے کہا کہ وفاقی حکومت سندھ میں ترقیاتی کام اپنے نمائندے سے کروانا چاہتی ہے،آرٹیکل 105 میں لکھا ہے کہ گورنر جو کام کرے گا وزیراعلیٰ کے مشورے سے کریگاآپ آئین پر چلیں‘کوئی مسئلہ نہیں ہوگا۔

مراد علی شاہ

مزید : صفحہ آخر