تحریک انصاف کا بیانیہ ”نوازکی جان پیاری ہے یا مال“ نون لیگ سے زیادہ مضبوط ہے،سینئر صحافی غریدہ فاروقی

تحریک انصاف کا بیانیہ ”نوازکی جان پیاری ہے یا مال“ نون لیگ سے زیادہ مضبوط ...
تحریک انصاف کا بیانیہ ”نوازکی جان پیاری ہے یا مال“ نون لیگ سے زیادہ مضبوط ہے،سینئر صحافی غریدہ فاروقی

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)نواز شریف کی بیرون ملک روانگی سے قبل سات ارب روپے کے مچلکے جمع کروانے کے موضوع پر تبصرہ کرتے ہوئے سینئر صحافی غریدہ فاروقی نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کابیانیہ سیاسی طور پرزیادہ مضبوط ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر کئے گئے ٹویٹ میں انہوں نے کہا”صحیح یا غلط کی بحث سے دور،سچ کہا جائے تو یہ درست ہے کہ پی ٹی آئی کا بیانیہ ”نواز کی جان پیاری ہے یا مال“ سیاسی طور سے زیادہ مضبوط نظر آتا ہے جبکہ نون کا بیانیہ تاحال کمزور ہے۔ پی ٹی آئی کی خوبی ہے کہ وہ اپنا بیانیہ زیادہ دبنگ طور پر hammering سے عوام تک پہنچاتی ہے،نون یہاں ناکام ہے۔“

غریدہ کے ٹویٹ پر سوشل میڈیا صارفین نے کہاں چپ بیٹھنا تھا۔”سعودنامی صارف نے لکھا کہ یہ بیانیہ اغواکاروں کا بیانیہ ہے، اغوا کے بعد پہلی فون کال پر وہ یہی ڈائیلاگ دہراتے ہیں“۔

سید دانش اقبال نے لکھا کہ "پی ٹی آئی کا بیانیہ درست تو نہیں ہے لیکن مظبوط ضرور ہے، جبکہ ن لیگ کا بیانیہ درست ہونے کے باوجود عوام تک مضبوطی سے پہنچتا نہیں ہے اور شاید اس کی وجہ خلوص کی کمی ہے "۔

احمد رضا نے لکھا کہ” محترمہ جھوٹ کے کوئی پاوں نہیں ہوتے۔۔۔نون لیگ اب تک صرف جھوٹ کی سیاست کرتے رہی ہے اور پاکستان کی عوام کو اب ان کی تمام مکروہ حرکات کا پتہ چل چکا ہے۔ پی ٹی آئی فالوورز کے اندر اتنا دم ہے کہ وہ غلط کو غلط اور صحیح کو صحیح کہنے میں کوئی ہچکچاہٹ محسوس نہیں کرتے۔“

ایک اور صارف نے لکھا کہ اللہ کی لاٹھی بڑی بے آواز ہے،آج ہر کوئی نواز شریف کی بیماری، قیدسزائیں، مقدمے، بیٹوں کی بیوفائی،کلثوم نواز کی دنیا سے تکلیف دہ رخصتی، پر پریشان ہے، ایک نظر ماضی پر بھی دوڑائیں اس خاندان کے ظلم، لوٹ مار، تکبر، رعونت، کتنے ہی گھر برباد کیئے ، حساب اسی دنیا میں بھی ہوتا ہے"

محمد ریاض غریدہ فاروقی سے نالاں دکھائی دیئے اور لکھا کہ "افسوس صد افسوس ۔۔۔آپ سے یہ امید نہ تھی ۔۔۔آپ مریم نواز کی ضمانت کو سامنے رکھیں ۔۔جو کچھ کورٹ نے آرڈر کیا ۔۔۔رقم، مچلکے اور پاسپورٹ تک جمع کرا دیا ۔۔۔۔وہ قانونی فورم تھا لہذا قانون کی پاسداری کی گیی لیکن فروغ نسیم کا ماضی دیکھیں یہ کس منہ سے نواز شریف سے بھتہ طلب کر رہا ہے "۔

رانا عرفان نے لکھا کہ "پلیٹلیٹس میں کمی کی نشاندہی کو تقریبا 25 دن ہونے کو ہیں ۔اور اب تک وہ بیماری ڈائیگنوس نہیں ہوسکی جس کی وجہ سے پلیٹلیٹس میں کمی ہو رہی ہے بلڈ سیمپل 12۔ 24 گھنٹے میں کسی بھی ملک کی لیب میں بھجوا کے اصل بیماری ڈائیگنوس کروائی جاسکتی تھی پتا نہیں یہ اب تک کیوں نہیں کروا رہے  " 

مزمل قریشی نے لکھا کہ "میڈم جسکے ساتھ "hammer" ہوتا ہے بیانیا بھی اسی کا "hammering" ہوتا ہے، باقی رہی عوام کی بات آج الیکشن فوج کی "نگرانی" کے بغیر کرالیں پتا چل جائے گا عوام کس کے ساتھ ہے "hammer" والوں کے ساتھ یا ووٹ کو عزت والوں کے ساتھ"۔

مزید : قومی