چوری کے بدلے جنسی زیادتی، شاپنگ مال کے گارڈ کی نوعمر لڑکیوں کے ساتھ انتہائی شرمناک حرکت

چوری کے بدلے جنسی زیادتی، شاپنگ مال کے گارڈ کی نوعمر لڑکیوں کے ساتھ انتہائی ...
چوری کے بدلے جنسی زیادتی، شاپنگ مال کے گارڈ کی نوعمر لڑکیوں کے ساتھ انتہائی شرمناک حرکت

  



لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) لندن کے ایک شاپنگ مال میں سکیورٹی گارڈ کی نوکری کرنے والے نوجوان نے دکانوں سے سامان چوری کرنے والی چار کم عمر لڑکیوں کو جنسی زیادتی کا نشانہ بناڈالا۔ میل آن لائن کے مطابق ضیاءالدین نامی یہ سکیورٹی گارڈ لڑکیوں کو سامان چوری کرتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑتا اور سٹور روم میں لیجا کر دھمکی دیتا کہ وہ اس کے ساتھ جنسی تعلق قائم کریں ورنہ وہ ان کے والدین کو بتا دے گا اور پولیس کو بلا لے گا۔

رپورٹ کے مطابق چاروں متاثرہ لڑکیوں کی عمریں 15سال کے قریب تھیں۔ ضیاءالدین کے ساتھی سکیورٹی گارڈز کو اس پر شک ہوا کیونکہ وہ اپنے سامان میں ’کنڈوم‘ رکھتا تھا اور انہیں لڑکی کی چوری کی سی سی ٹی وی فوٹیج ڈیلیٹ کرنے کو کہتا تھا۔ چنانچہ ان لوگوں نے پولیس کو مطلع کر دیا۔ پولیس نے ان چاروں لڑکیوں کا سراغ لگا کر ان سے پوچھ گچھ کی تو انہوں نے حقیقت بتادی۔عدالت میں بیان دیتے ہوئے ان لڑکیوں کا کہنا تھا کہ ”اس صورتحال میں ہمارے پاس اس سکیورٹی گارڈ کی بات ماننے کے سوا کوئی چارہ نہیں تھا۔ اگر وہ پولیس کو بلا لیتا تو ہمیں جیل ہو سکتی تھی۔ کنگسٹن کراﺅن کورٹ میں ضیاءالدین پر تمام الزامات ثابت ہو چکے ہیں اور اسے 19نومبر کو سزا سنائی جائے گی۔ “

مزید : ڈیلی بائیٹس