مظفر گڑھ، اجتماعی بداخلاقی کا شکار دو شیزہ مقدمہ ردج نہ ہونے پر احتجاجاً آگ میں زندہ جل گئی

مظفر گڑھ، اجتماعی بداخلاقی کا شکار دو شیزہ مقدمہ ردج نہ ہونے پر احتجاجاً آگ ...

مظفر گڑھ (بیورو رپورٹ 228 تحصیل رپورٹر 228 سٹی رپورٹر) مظفر گڑھ پولیس سے انصاف نہ ملنے پر لڑکی نے دلبرداشتہ ہو کر تھانہ سٹی کے سامنے خود پر پٹرول چھڑک کر آگ کر خود کشی کر لی تفصیل کے مطابق مظفر گڑھ دین پور کے رہائشی محمد رمضان کی 20سالہ بیٹی سونیا چند روز قبل اپنے قریبی عزیز قیوم دستی کے گھر کسی ضروری کام کے سلسلے میں گئی تو وہاں پر پہلے سے موجود قیوم دستی کے دیگر ساتھی مونا دستی ،نور حسین اے ایس آئی سمیت 3 افراد نے مبینہ طور پر سونیا سے اجتماعی بداخلاقی کی جس پر سونیا نے تھانہ سٹی مظفر گڑھ میں اندراج مقدمہ کیلئے تحریری درخواست دی لیکن مقدمہ درج نہ ہونے پرسونیا نے تھانہ سٹی کے سامنے دلبرداشتہ ہو کر خود پر پٹرول چھڑک لیا اور آگ لگا لی جس سے خاتون کا 80فیصد جسم جھلس گیا ڈاکٹر ز،خاتون کے بیان کے مطابق کرنے والے تین افراد قیوم دستی ،مونا دستی ،نور ڈکھنا ہے مظفر گڑھ تھانہ سٹی میں دین پور کی رہائشی 20سالہ سونیا نے خود پر پٹرول چھڑک کر آگ لگا لئی واقع کی تفصیل کچھ اس طرح ہے کہ 7روز قبل سونیا سے قیوم کے ڈیرہ پر 3افراد نے بداخلاقی کی جس کی رپٹ وہ سٹی میں کروانا چاہتی تھی مگر پولیس کی جانب سے شنوائی نہ ہونے پر اس نے دل برداشتہ ہو کر خود کو آگ لگالی جس ریسکیو1122نے ڈسٹرکٹ ہسپتال مظفر گڑھ منتقل کر دیا جہاں پر خاتوں نے پولیس کو بیان دیا ہے کہ 7روز قبل قیوم دستی کے ڈیرہ پر اس کے ساتھ تین لوگوں قیوم دستی ،مونا دستی اور نورڈکھنا نے زیادتی کی جس کی رپٹ لکھوانے وہ تھانہ صدر کے چکر لگاتی رہی مگر پولیس نے اس کی نہ سنی جس پر اس نے دلبردشتہ ہو کر خود کو پٹرول چھڑک کر آگ لگا لئی جس کو تشویس ناک حالت میں ڈی ایچ کیو ہسپتال منتقل کر دیا گیا بعد ازاں سونیا کو تشویش ناک حالت میں نشترہسپتال میں منتقل کر دیا جہاں پر وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ہو گئی ڈسٹرکٹ پویس آفیسر اویس احمد ملک نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ سونیانے گذشتہ چند روز قبل تھانہ سٹی مظفر گڑھ میں جو درخواست دی تھی اس میں بداخلاقی کا ذکر نہ تھا بلکہ مار پیٹ اور کانوں سے بالیاں کھینچے کا ذکر تھا جس پر ایس ایچ او سٹی نے جب ملزمان کو طلب کیا تو سونیا نے 11-10-15کو راضی نامہ دے دیا لیکن آج پھرنہ جانے کن وجوہات کی بنا پر خود پر پٹرول چھڑک کر آگ لگا لی ہے مقتولہ کے والد محمد رمضان کی مدعیت میں 5افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے جبکہ ایک پولیس اہلکار اے ایس آئی نور حسین کو بھی اس مقدمہ میں گرفتار کر لیا ہے اور ایس ایچ او سٹی بلال پٹھان کو غفلت برتنے کے باعث معطل کر دیا گیا ہے۔

مزید : ملتان صفحہ اول


loading...