عوام کو لوٹنے اور ملکی خزانے کو نقصان پہنچانے والوں کا احتساب ہونا چاہیے ‘ ڈاکٹر وسیم اختر

عوام کو لوٹنے اور ملکی خزانے کو نقصان پہنچانے والوں کا احتساب ہونا چاہیے ‘ ...

ملتان (پ ر) پارلیمانی لیڈرصوبائی اسمبلی وامیر جماعت اسلامی پنجاب ڈاکٹر سید وسیم اختر، نائب امیر چودھری عزیر لطیف، سیکرٹری جنرل نذیر احمدجنجوعہ، ڈپٹی سیکر ٹری جنرل راؤ ظفر اقبال نے نیپراکی رپورٹ کہ جس میں انکشاف کیاگیاہے کہ’’ وزارت بجلی نے 70فیصد صارفین کوغلط بل بھیجے‘(بقیہ نمبر16صفحہ12پر )

‘پرتشویش کا اظہارکرتے ہوئے کہاہے کہ اس معاملے کی شفاف تحقیقات ہونی چاہئیں۔عوام کولوٹنے اور ملکی خزانے کونقصان پہنچانے والوں کابلاتفریق احتساب ہوناچاہئے۔عوام مہنگائی اور بے روزگاری سے تنگ ہوکر خودکشیاں کررہے ہیں اور حکمرانوں نے قومی خزانے کامنہ اپنی عیاشیوں کے لئے کھول رکھا ہے۔انہوں نے کہا کہ موسم تبدیل ہورہا ہے مگر اس کے باوجود لوڈشیڈنگ کے غیر اعلانیہ دورانیے میں کسی قسم کی کوئی کمی نہیں کی گئی۔ شہروں میں10 سے 12 اور دیہات میں 16سے18گھنٹے کی لوڈشیڈنگ سے عوام تنگ آچکے ہیں۔شارٹ فال کم ہونے کانام نہیں لے رہا،مختلف علاقوں میں پانی نایاب ہوچکا ہے، لوگ سراپا احتجاج ہیں۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان وسائل سے مالاملک ہے۔بلوچستان میں کوئلے کے اتنے بڑے ذخائر موجود ہیں جن سے ماہرین کی رائے کے مطابق تقریباتین سو سال تک سستی بجلی میسر آسکتی ہے۔مگر صد افسوس حکمران نندی پور اور رینٹل پاور جیسے متنازعہ اور مہنگے ترین منصوبوں پر کام کررہے ہیں تاکہ ان کاکمیشن محفوظ رہے۔فرنس آئل سے مہنگی بجلی تیار کرنے کی بجائے حکومت پن بجلی اور کوئلے سے بجلی بنانے پرتوجہ دے۔ جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی رہنما ظفرجمال بلوچ نے کہا ہے کہ فوج مجموعی طور پر اچھا کام کررہی ہے اگر فوج کسی مصلحت کا شکار نہ ہوئی تو کراچی ، بلوچستان سمیت پورے ملک میں امن قائم ہوگا ورنہ سب کچھ برباد ہوجائے گا۔ موجودہ نظام میں صرف چہرے بدلیں گے قوم کی قوم کی تقدیر اور قسمت نہیں بدلے گی۔ قوم نجات دہندہ چاہتی ہے تو جماعت اسلامی کا ساتھ دے۔ جماعت اسلامی جمہوری ،انقلابی و اسلامی جماعت ہے جس کی قیادت کے دامن پر کوئی دھبہ نہیں ۔ ان خیا لات کا اظہار انہوں نے ملتان میڈیا سنٹر میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ جماعت اسلامی پنجاب (جنوبی) کے میڈیاکوآر ڈی نیٹر کنور محمد صدیق ، فیاض اسلم بھی موجود تھے۔ انہوں نے کہا کہ جب تک قوم میں نظریاتی شعور اور سیاسی جماعتوں میں نظریاتی سیاست راج نہیں کرپائے گی اُس وقت تک جمہوریت ہچکیاں لیتی رہے گی اور مسائل گھٹنے کی بجائے بڑھتے رہیں گے۔

وسیم اختر

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...