عدالت سے طلاق لینے پر سابقہ سسرالی ناراض، جرگہ کاخاتون کو جرمانہ

عدالت سے طلاق لینے پر سابقہ سسرالی ناراض، جرگہ کاخاتون کو جرمانہ

صادق آباد(تحصیل رپورٹر)عدالت میں تنسیخ نکاح کا دعوی دائر کر کے طلاق حاصل کرنے کی رنجش پر علاقہ کے با اثر وڈیروں نے زبردستی جرگہ بلا کرخاتون پر 5لاکھ روپے جرمانہ عائد کر دیا‘ ٹبہ بلوچاں صادق آبا دکی رہائشی جنت بی بی زوجہ(بقیہ نمبر20صفحہ12پر )

محمد اسلام خاں نے اپنی بیٹی نازیہ بی بی اور داماد محمد ارشد کے ہمراہ اخبا رنویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ تقریبا تین سال قبل اپنی بیٹی نازیہ بی بی کی شادی کجلے خاں کیساتھ کی تھی اس دوران میری بیٹی کا سسر محمد بخش اس پر بری نظر رکھنے لگا وہ میری بیٹی کو مجبو رکرتا تھا کہ وہ اسکے ساتھ تعلقات استوار کرے ورنہ وہ اسے کالی قرار دیکر قتل کروا دے گا جس پر میری بیٹی نے اپنے خاوند کجلے خاں کو اس بارے بتایا تو اس نے نازیہ بی بی پر تشدد کیا ا ن حالات میں وہ بیٹی کو اپنے گھر لے آئی ‘نازیہ بی بی کے اسرار اور اس کو اپنے خاوند سے شدید نفرت کی وجہ سے فیملی جج صادق آباد کی عدالت میں دعوی تنسیخ نکاح دائر کیا تو عدالت نے دعوی ڈگری کر دیا جس کا ملزمان علی مراد‘ شاہ نواز‘ عالم خاں وغیرہ کو رنج پہنچا جنہوں نے زبردستی جرگہ بلا کر فتویٰ دیا کہ طلا ق جو عدالت سے لی گئی ہے وہ برادری رواج کیخلاف ہے اس لیے وہ 5لاکھ روپے تاوان ادا کریں ورنہ نازیہ بی بی کو کالی قرار دیکر قتل کر دیاجائیگا‘4اکتوبر 2015ء کو میں نے اپنی بیٹی نازیہ بی بی کا نکاح و شادی محمد ارشد نامی شخص کیساتھ کر دی اور لاہور ہائی کورٹ بہاول پور بینچ میں رٹ پٹیشن بھی مذکورہ ملزمان کو فریق بنا کر دائر کی جس کی رنجش پر اب ملزمان محمد بخش‘ کجلے خاں اپنے دیگرتین ساتھیوں کے ہمراہ مسلح ہو کر چادر اور چار دیواری کا تقدس پامال کرتے ہوئے ہمارے گھر داخل ہو گئے اور آتے ہی میری بیٹی نازیہ بی بی پر تشدد کرنا شروع کر دیا بالو ں سے پکڑ سے گھسیٹتے رہے اور اسے زبردستی اغواء کر کے اپنے ساتھ لیجانے لگے تو ہمارے شور واویلا پر اہل علاقہ جمع ہو گئے جنہیں دیکھ کر ملزمان قتل سمیت سنگین نتائج کی دھمکیاں دیتے ہوئے فرار ہو گئے ملزمان کیخلاف کاروائی کیلئے پولیس تھانہ سٹی صادق آباد کو تحریری درخواست بھی دیدی ہے انھوں نے وزیراعلی پنجاب شہبازشریف‘آئی جی پنجاب پولیس‘ڈی آئی جی بہاول پور اور ڈی پی اورحیم یارخان سے ملزمان کیخلاف کاروائی کر کے انصاف فراہم کرنیکا مطالبہ کیا ہے ۔

جرمانہ

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...