ضلع چارسدہ کو ماڈل بنایا جائیگا ،ڈپٹی کمشنر

ضلع چارسدہ کو ماڈل بنایا جائیگا ،ڈپٹی کمشنر

چارسدہ (بیورورپورٹ) ڈپٹی کمشنر چارسدہ (ر) کیپٹن طاہر ظفر عباسی نے کہا ہے کہ منتخب بلدیاتی نمائندوں کے تعاون سے ضلع چارسدہ کو ماڈل ضلع میں تبدیل کیا جائیگا۔ بلدیاتی اداروں کیلئے رولز آف بزنس جاری ہونے کے بعد منتخب نمائندوں کے تعاون سے عو ام کے فلاح و بہبود کے منصوبوں پر کام شروع کیا جائیگا۔ صحافی عوام کو درپیش مسائل اور ریاستی اداروں کی کمزوریوں کی نشاندہی کریں تاکہ حکومت اور اداروں پر عوام کا اعتماد بحال ہو سکے ۔ وہ اپنے دفتر میں چارسدہ پریس کلب کے صدر سرتاج خان کی قیادت میں کابینہ ، گورننگ بورڈ اور پریس کلب کے دیگر ممبران پر مشتمل نمائندہ وفد سے بات چیت کر رہے تھے ۔ وفد میں پریس کلب کے جنرل سیکرٹری سبز علی خان ترین ، فنانس سیکرٹری سیف اللہ جان ، جائنٹ سیکرٹری کفایت اللہ ، آفس سیکرٹری اعجاز خالد ،گورننگ بورڈ کے ممبران شاہ رضا شاہ ، نور الوہاب ، مشتاق احمد ، احسان شیر پاؤ ، داؤد درانی ، پریس کلب کے ممبران اشفاق ، کفایت اللہ سرڈھیری ، شبیر احمد اور دیگر بھی شامل تھے ۔ ڈپٹی کمشنر کیپٹن طاہر ظفر عباسی نے اس امر پر حوشی کا اظہار کیا کہ چارسدہ پریس کلب مکمل طورپر فعال ہو چکا ہے اور جمہوری عمل کے ذریعے منتخب کابینہ اپنی ذمہ داریاں بطریقہ احسن سر انجام دے رہی ہے۔ انہوں نے صحافیوں پر زور دیا کہ قلم کے ذریعے عوامی مسائل اجاگر کریں اور ریاستی اداروں کی کمزوریوں کی نشاندہی کریں تاکہ ریاستی اداروں اور حکومت پر عوام کا اعتماد بحال ہو سکے۔ انہوں نے کہاکہ صوبائی حکومت نے بلدیاتی اداروں کو اختیارات تقویض کرکے ایک اچھا اقدام کیا ۔ موجودہ بلدیاتی نظام سے ایک طرف ریاستی اداروں پر کام بوجھ کم ہو جائیگاجبکہ دوسری طرف عوام کے مسائل و مشکلات ان کے دہلیز پر حل ہونگے ۔ انہوں نے کہاکہ بلدیاتی اداروں کیلئے رولز آف بزنس جاری ہو نے کے بعد منتخب عوامی نمائندوں کے کوآرڈنیشن سے عوام کے فلاح و بہبود کے منصوبوں پر کام شروع کیا جائیگا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...