نشتر میں بہتر سہولیات نہ ملنے کیخلاف وکلاء کی احتجاجی ریلی ‘ عدالتی بائیکاٹ

نشتر میں بہتر سہولیات نہ ملنے کیخلاف وکلاء کی احتجاجی ریلی ‘ عدالتی بائیکاٹ

ملتان (نمائندہ خصوصی) سٹینڈنگ کونسل آف پاکستان غلام مرتضیٰ ملک کی یاد میں ہونے والے تعزیتی اجلاس میں حکومت اور نشتر ہسپتال انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔ اجلاس میں صحت کی سہولیات بہتر نہ ہونے پر تنقید کے ساتھ احتجاجی ریلی نکالی گئی اور سوگ میں عدالتی کام بھی بند کیا گیا۔ تفصیل کے مطابق (بقیہ نمبر24صفحہ7پر )

برین ہیمرج کے باعث انتقال کر جانے والے سٹینڈنگ آف پاکستان غلام مرتضیٰ ملک کی یاد میں گزشتہ روز ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن ملتان کی جانب سے ارجنٹ مقدمات کی سماعت کے بعد سوگ میں عدالتی کام بند کیا گیا اور وکلاء مقدمات کی پیروی کیلئے عدالتوں میں پیش نہ ہوئے جبکہ ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن ملتان کی جانب سے مکمل طور پر عدالتی کام بند رکھا گیا۔ بعدازاں ہائیکورٹ بار روم میں تعزیتی اجلاس منعقد کیا گیا جس میں خطاب کرتے ہوئے صدر بار سید محمد علی گیلانی نے کہا کہ حکومت جو چاہے منصوبے بنائے لیکن صحت کی بہتر سہولیات کیلئے بھی اقدامات کرے جبکہ نشتر ہسپتال کی حالت بہت خراب ہے۔ وہاں پر آنے والے مریضوں کو پرائیویٹ ہسپتالوں میں منتقل کر دیا جاتا ہے۔ اس لئے لوگوں کو بنیادی سہولیات فراہمی کیلئے تحریک چلائی جانی چاہیے اور لائحہ عمل اختیار کرنا چاہیے جبکہ وکلاء برادری میں جتنا اتحاد اور یگانگت ہے اتنا کسی اور برادری میں نہیں ہے۔ ممبر پاکستان بار کونسل میاں عباس احمد نے کہا کہ غلام مرتضیٰ ملک کیلئے وینٹی لیٹر کیلئے تگ و دو کی اور کوئی انتظام نہ ہونے پر سینئر حج ہائیکورٹ ملتان بنچ سے رابطہ کیا جس پر انہوں نے ایڈیشنل رجسٹرار اور پرائیویٹ سیکرٹری کو موقع پر بھیج دیا۔ اس سے بڑا المیہ نہیں ہے کہ ایمرجنسی میں وینٹی لیٹر نہیں ہے اور حکومت 80 ارب کے من پسند منصوبے تو دے سکتی ہے لیکن وہ تین بہترین ہسپتال نہیں دے سکتی۔ سابق جج حبیب اللہ شاکر نے کہا کہ جو حکمران عوام کے مسائل پر توجہ نہیں دے سکتے ان کا اقتدار میں رہنے کا کوئی جواز نہیں ہے۔ یہاں 150 ارب روپے سے نئی ٹرینیں چلانے کی باتیں ہو رہی ہیں لیکن عوام بنیادی سہولیات نہ ہونے کی وجہ سے لقمہ اجل بن رہے ہیں۔ سابق صدر ہائیکورٹ بار محمود اشرف خان نے کہا کہ ملک پر ایسے نااہل حکمران مسلط ہیں جن کو عوام کے حقوق اور بنیادی ضروریات تک کا پتہ نہیں ہے۔ ایسے نالائق حکمران قوم کیلئے اذیت کا باعث بنتے ہیں۔ اس جانب توجہ نہیں دی گئی تو حکمرانوں کو گریبانوں میں ہاتھ ڈال کر سڑکوں پر لائیں گے۔ سابق صدر ہائیکورٹ بار شیخ جمشید حیات نے کہا کہ غلام مرتضیٰ ملک (مرحوم) نے محنت اور دیانتداری سے ہمیشہ عوام کی خدمت کی۔ اجلاس میں نظامت کے فرائض جنرل سیکرٹری محمد مالک خان لنگاہ نے انجام دئیے۔ اجلاس کے اختتام پر ہائیکورٹ بار سے ایس پی چوک تک احتجاجی ریلی نکالی گئی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...