اپٹما کا یومِ سیاہ، 200 ٹیکسٹائل ملز بند ہوگئیں

اپٹما کا یومِ سیاہ، 200 ٹیکسٹائل ملز بند ہوگئیں
اپٹما کا یومِ سیاہ، 200 ٹیکسٹائل ملز بند ہوگئیں

  


لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)آل پاکستان ٹیکسٹائل ملز ایسوسی ایشن نے اپنے مطالبات کے حق میں یومِ سیاہ مناتے ہوئے ہڑتال کردی ہے۔ جبکہ اپٹما کے مرکزی آفس پر سیاہ پرچم بھی لہرادیے گئے ہیں۔

اپٹما کی ہڑتال کے باعث خیبرسے کراچی تک ٹیکسٹائل ملزایک ساتھ بند کردی گئی ہیں۔ ہڑتال سے مانگا منڈی،رائیونڈ اورشیخوپورہ کے صنعتی زونزمیں200 ٹیکسٹائل ملزبند ہوگئی ہیں۔

چیئرمین اپٹما پنجاب زون عامر فیاض نے کہا ہے کہ حکومت کے منفی رویے کے باعث ٹیکسٹائل برآمدات میں21 فیصد کمی ہوئی ہے جس کی وجہ سے ٹیکسٹائل ملز بند ہورہی ہیں۔ ٹیکسٹائل ملزکی بندش سے لاکھوں مزدوربےروزگار ہوجائیں گے۔

اپٹما کے چیئر مین نے مطالبہ کیا کہ ٹیکسٹائل پر زیرو ریٹڈ ڈیوٹی عائد کی جائے،بجلی کے ٹیرف میں 3روپے کمی کی جائے، گیس ڈیولپمنٹ سرچارج واپس لیا جائے اوربھارت سے یارن کی درآمد بند کی جائے گی۔

انہوں نے بتایا کہ ٹیکسٹائل ملزآج صبح9بجے سے شام6بجے تک بند رہیں گی۔

مزید : بزنس


loading...