پاکستانی میاں بیوی 5 بچوں سمیت برطانیہ سے بھاگ کر داعش میں شامل ہونے کیلئے شام پہنچ گئے، ناقابل یقین انکشاف

پاکستانی میاں بیوی 5 بچوں سمیت برطانیہ سے بھاگ کر داعش میں شامل ہونے کیلئے ...
پاکستانی میاں بیوی 5 بچوں سمیت برطانیہ سے بھاگ کر داعش میں شامل ہونے کیلئے شام پہنچ گئے، ناقابل یقین انکشاف

  


لندن (نیوز ڈیسک) بچوں کی اچھی تعلیم وتربیت کے لئے والدین انہیں کسی بڑے شہر یا حتیٰ کہ اپنا ملک چھوڑ کر کسی جدید ترقی یافتہ ملک لے جانے کی تکلیف بھی گوارہ کرلیتے ہیں، لیکن ایک پاکستانی نژاد خاندان سے تعلق رکھنے والی برطانوی ماں نے مبینہ طور پر اپنے بچوں کی بہتری اس میں جانی کہ انہیں ترقی یافتہ برطانیہ سے نکال کر جنگ کی آگ میں دہکتے ملک شام میں لے جائے۔

دنیا کی ایسی جگہ جہاں خواتین کی چھاتی کو استری کردیا جاتا ہے ،،،کیو نکہ۔۔۔ایسی روایت جسے سوچ کر ہی انسان کانپ اٹھے

برطانوی میڈیا کے مطابق چالیس سالہ فرزانہ اور اس کا شوہرعمران امین اپنے پانچ بچوں کے ساتھ غائب ہیں اور برطانوی ایجنسیوں کا خیال ہے کہ وہ ترکی فرار ہوچکے ہیں جہاں سے شام جانے کا ارادہ رکھتے ہیں۔ جریدے ”ڈیلی میل“ کے مطابق فرزانہ نے بریڈ فورڈ شہر میں اپنے کچھ رشتہ داروں کو غائب ہونے سے عین پہلے بتایا تھا کہ ”میں وہی کرنے جارہی ہوں جو میرے بچوں کے لئے بہتر ہے۔“

ویسٹ یارک شائر پویس کا کہنا ہے کہ فرزانہ اور اس کے بچوں کو آخری مرتبہ پانچ اکتوبر کو دیکھا گیا لیکن ان کی گمشدگی کی رپورٹ گزشتہ روز درج کروائی گئی۔ پولیس کا کہنا ہے کہ ان کے لئے بچوں کی سلامتی سب سے اہم ہے، جبکہ خاتون کے کزن ارشد صدیقی کا کہنا تھا کہ ان کا خاندان اس واقع پر صدمے کا شکار ہے۔

اگر آپ آن لائن سستی ٹکٹیں حاصل کرنا چاہتے ہیں تو بک کرتے وقت یہ ایک کام ضرور کرلیں

غائب ہونے والی فیملی کے ایک رشتہ دار نے یہ بھی بتایا کہ فرزانہ کچھ دن پہلے پاکستان گئی اور اپنی والدہ کو وہاں چھوڑنے کے بعد واپس آگئی، اور اب ان کا گھر ویران پڑا ہے، دروازوں پر تالے لگے ہیں، کھڑکیوں کے آگے گہرے پردے لٹکے ہوئے ہیں، اور وہاں سوائے تاریکی کے کچھ بھی نظر نہیں آ رہا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...