جمشید دستی کی فری بسوں کو روکنا اور تھانوں میں بند کرنا انتہائی مزموم حرکت‘ حذیفہ شاکر

  جمشید دستی کی فری بسوں کو روکنا اور تھانوں میں بند کرنا انتہائی مزموم ...

  



کوٹ ادو (تحصیل رپورٹر) جمشید کی جانب سے مولانا فضل الرحمن کے آزادی مارچ میں شرکت کے اعلان کے بعد انکی جانب سے چلنے والی فری بسوں کو روکنا اور تھانوں میں بند کرنا(بقیہ نمبر47صفحہ12پر)

انتہائی مذموم حرکت ہے،ان خیالات کا اظہار جمعیت علماء اسلام ضلع مظفر گڑھ کے قائم مقام امیر محمد حذیفہ شاکر نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا،ضلع مظفر گڑھ کے ضلع سیکرٹری جنرل مولانا شبیر لقمان ضلعی نائب امیر مولانا عبدالمجید توحیدی و دیگر ضلعی عاملہ کے اراکین نے اس عمل کی شدید مذمت کی اور جمشید دستی سے مکمل یکجہتی کا اعلان کیا،مزید کہا کہ اس وقت پوری قوم کی نگاہیں 27 اکتوبر کو مولانا فضل الرحمن کی قیادت میں ہونے والے آزادی مارچ کی طرف ہیں،ملک بھر سے لاکھوں لوگ اس آزادی مارچ میں شریک ہونگے جو موجودہ نا اہل و سلیکٹڈ حکومت کے تابوت میں آخری کیل ثابت ہوگا،جمعیت علماء اسلام ایک پرامن سیاسی و مذہبی جماعت ہے یہی وجہ ہے کہ مولانا فضل الرحمن نے اپنے کارکنان کو پر امن انداز میں اسلام آباد پہنچنے کا حکم دیا ہے،اسکے باوجود اداروں کی جانب سے جمعیت علماء اسلام کے کارکنان کو ہراساں کرنا سمجھ سے بالا تر ہے،اس طرح کے ہتھکنڈے آزادی مارچ میں رکاوٹ نہیں بن سکیں گے،ضلع مظفر گڑھ سے ہزاروں کی تعداد میں کارکنان اور عوام الناس بھرپور انداز میں آزادی مارچ میں شریک ہونگے

حذیفہ شاکر

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...