شادمان اتوار بازار، مہنگائی آسمان کو چھونے لگی، سکیورٹی ناقص، انتظامیہ خاموش

شادمان اتوار بازار، مہنگائی آسمان کو چھونے لگی، سکیورٹی ناقص، انتظامیہ ...

  



لاہور (اپنے نمائندے سے)شادمان اتوار بازار پر مہنگائی آسمان کو چھونے لگی، ناقص کوالٹی کی سبزیاں اور پھل مہنگے داموں فروخت ہونے لگیں۔ خریدار مایوس ہو کر گھر لوٹنے پر مجبور ہو گئے۔ شادمان اتوار بازار میں مہنگائی کا راج اشیائے خور و نوش کی قیمتیں بہت زیادہ ہیں اور ان کا معیار ناقص درجے کا ہے۔ شادمان اتوار بازار میں سبزیوں کی قیمتیں اوپر جبکہ معیار نیچے جا رہا ہے۔شادمان اتوار بازار میں قیمتیں عام آدمی کی پہنچ سے باہر ہیں۔ اتوار کے اندر داخل ہونے والا راستہ بھی کھلا ہے جو مرضی اتوار بازار کے موٹر سائیکل لے کر چلا جا تا ہے جس کی وجہ سے کوئی بھی حادثہ پیش آ سکتا ہے۔شہریوں کا کہنا ہے کہ ضلعی انتظامیہ دعوے تو بہت کرتی ہے مگر قیمتوں اور معیار پر کنٹرول کے لئے عملی اقدامات کہیں نظر نہیں آتے۔ شادمان اتوار بازار میں سبزیوں کے ریٹس لہسن 250، لہسن چائنہ 220، ادرک 300، سبز مرچ230، ٹماٹر80، پیاز70، کریلے 100، دیسی ٹینڈے 90، لوکی 100،میتھی 85، بند گوبھی45،کھیرا52، مکئی کے سٹے 13، اروی70، بھنڈی 73، گھیا کدو60، بیگن گول 55، پھول گوبھی 60روپے کلو کے حساب سے فروخت ہوتے رہے۔کیلا50 روپے درجن، سیب 120،جاپانی پھل100،، ناشپاتی 60، انار 120، کھجور150، گرے فروٹ 15روپے فی دانہ، شکر قندی 80روپے کے حساب سے فی کلو میں فروخت ہو رہی ہے۔شہریوں کا کہنا ہے کہ حکومت اور ضلعی انتظامیہ اتوار بازاروں میں اشیاء کا معیار بہتر بنانے کے ساتھ ساتھ قیمتوں کو بھی کنٹرول میں رکھے تاکہ عام آدمی مہنگائی کی چکی میں پسنے سے بچ سکے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...