بھارت میں اقلیتوں کے حقوق سلب کئے جا رہے ہیں، بیرسٹر سلطان محمود

بھارت میں اقلیتوں کے حقوق سلب کئے جا رہے ہیں، بیرسٹر سلطان محمود

  



اسلام آباد(آ ن لائن) آزاد کشمیر کے سابق وزیراعظم و پی ٹی آئی کشمیرکے صدر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی (NDU)اسلام آباد میں آزاد کشمیر کی مختلف یونیورسٹیز کے طلبا و طالبات سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارت میں بنیاد پرست ہندؤوں کی اکثریت مودی کی آمریت کی صورت میں اقلیتوں پر مسلط ہے جو کہ بھارت میں مقیم اقلیتوں کے حقوق سلب کر رہی ہے۔کئی مسلمانوں کو اس بنیاد پر شہید کر دیا گیا کہ انھوں نے گائے کا گوشت کھایا تھا اور اسی طرح سکھوں کے گولڈن ٹیمپل، عیسائیوں کے گرجا گھروں کو بھی نقصان پہنچایا گیا مودی بنیادی طور پر آر ایس ایس کا تاحیات رکن ہے جو کہ وہاں پر وزیر اعظم بن بیٹھا ہے جبکہ اس نے گجرات میں جب وہ گجرات کا وزیر اعلی تھا مسلمانوں پر مظالم ڈھائے اور اب جب سے وہ دوبارہ اقتدار میں آیا ہے تو اس نے مقبوضہ کشمیر میں 5 اگست کو غیر آئینی ترامیم کرکے آرٹیکل370 اور 35 A کو ختم کرکے مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت کو ختم کرنے کی کوشش کی ہے اور 5 اگست سے اب تک جبکہ اس واقعے کا 68 واں روز ہے مقبوضہ کشمیر میں کرفیو نافذ ہے اور 80 لاکھ کشمیریوں کوگھروں میں قید کر کے رکھا گیا۔ لیکن مودی جان لے کہ جیسے ہی کرفیو اٹھے گا لاکھوں کشمیری سڑکوں پر احتجاج کے لئے نکلیں گے کشمیری کسی صورت بھارتی تسلط کو نہیں مانتے۔ بھارت اپنے توپ و تفنگ سے کشمیریوں کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا۔بھارت ویسے بھی کبھی ملک نہیں رہا انشا ء اللہ بھارت کا شیرازہ بھی سویت یونین کی طرح جلد بکھرنے والا ہے۔

سلطان محمود

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...