آرمی چیف نے تاجروں کو بھارت کے حوالے سے کیا باور کروایا ؟ فردوس عاشق اعوان نے بتادیا

آرمی چیف نے تاجروں کو بھارت کے حوالے سے کیا باور کروایا ؟ فردوس عاشق اعوان نے ...
آرمی چیف نے تاجروں کو بھارت کے حوالے سے کیا باور کروایا ؟ فردوس عاشق اعوان نے بتادیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) مشیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہاہے کہ آرمی چیف نے سرمایہ کاروں کوملاقات میں باور کرایا کہ پاکستان کے جیوپولیٹکل حالات کیاہے اور اس میں سول حکومت کا کیا کردار ہے جبکہ فوج کیا کردار ادا کررہی ہے؟ آرمی چیف نے تاجروں کو بتایا کہ بھارت خطے میں کیا چاہتا ہے ؟ان کا کہناتھا کہ جوقوانین موجود ہیں ، ان سے ایماندار تاجروں کو کوئی خطرہ نہیں ہے ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”آن دا فرنٹ“میں گفتگو کرتے ہوئے فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ پنجاب میں سو صنعتیں بحال ہوئی ہیں اور صرف ٹیکسٹائل انڈسٹری نے 40ارب کا ٹیکس دیا ہے، ہمارا پہلا ایجنڈہ معیشت کی بہتری ہے ، روپے کی قدر پھر بحال ہوگی ، اس وقت ہم نے غیر ضروری در آمدات روکی ہوئی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں بہت سے چیلنجز کا سامنا تھا لیکن حکومت کے بہتر اقدامات سے معاشی معاملات بہتر ہوئے ہیں۔ پہلے صرف حکومت قرضے لے رہی تھی اور چند خاندانوں کونوازنے کیلئے قرضے لئے جارہے تھے۔انہوں نے کہا کہ آرمی چیف اور وزیر اعظم کا متفقہ ایجنڈہ تھا کہ ہم نے سرمایہ کاروں کا اعتماد بحال کرنا ہے اوروہ لوگ جو سرمایہ لگاناچاہتے لیکن کنفیوژن کا شکا ر ہیں ، ان کا اعتماد بحال کیاجائے اس لئے سرمایہ کار آرمی چیف اور وزیر اعظم سے ملے اوریہ وزیر اعظم عمران خان چاہتے تھے ۔

فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا کہ آرمی چیف نے سرمایہ کاروں کوملاقات میں باور کرایا کہ پاکستان کے جیوپولیٹکل حالات کیاہے اور اس میں سول حکومت کا کیا کردار ہے جبکہ فوج کیا کردار ادا کررہی ہے ۔ آرمی چیف نے تاجروں کو بتایا کہ بھارت خطے میں کیا چاہتا ہے ؟ان کا کہناتھا کہ جوقوانین موجود ہیں ، ان سے ایماندار تاجروں کو کوئی خطرہ نہیں ہے ۔انہوں نے کہا کہ مولانا فضل الرحمان کی باتیں دیوانے کی بڑھکیں ہیں ، وہ خود بھی اپنے آپ کوسنجیدہ نہیں لیتے تو ہم نے ان کو کیا سنجیدہ لیناہے ؟ انہوں نے کہا کہ اس وقت ملک کے جوحالات ہیں ، کوئی بھی فہم وفراست رکھنے والا شخص ایسی حرکتیں نہیں کرتا ۔

مزید : قومی