تعلیمی وطبی میدان میں حکیم محمد سعید کی خدمات ناقابل فراموش ہیں، میاں اسلم اقبال 

تعلیمی وطبی میدان میں حکیم محمد سعید کی خدمات ناقابل فراموش ہیں، میاں اسلم ...

  

لاہور(فلم رپورٹر)شہید پاکستان حکیم سعید کی 24ویں برسی کے موقع پر الحمرا ہال نمبر 2میں ایک شاندار اور پروقار تقریب کا اہتمام کیا گیا۔تقریب کا آغاز قاری عبدالجبار نے تلاوت کلام پاک سے کیا بعد ازاں صدارتی ایوارڈ یافتہ نعت خواں حافظ مرغوب احمد ہمدانی نے نعت رسول مقبول ؐپیش کر کے دلوں کو منور کیا۔ تقریب کی صدارت جسٹس ناصرہ جاوید اقبال نے کی جبکہ مہمان خصوصی صوبائی وزیر صنعت وتجارت میاں محمد اسلم اقبال تھے۔گیسٹ آف آنر کے طورپر مجیب الرحمن شامی سینئر صحافی تجزیہ نگار،مدیر اعلیٰ روزنامہ پاکستان،خالد عیاض خان ڈی جی پراسیکیوشن پنجا ب، احمد اویس ایڈووکیٹ جنرل پنجاب،عمران مرتضی ایم ایس فاؤنٹین ہاؤس لاہور،میاں حبیب اللہ اینکر پرسن،ذوالفقار راحت اینکر پرسن،میاں محمد عمیر مسعود صدر کسان اتحاد،حکیم راحت نسیم، پروفیسر میاں محمد اکرم،پروفیسر ناصر بشیر،چوہدری غلام مرتضی معصومی صدر کسان اتحاد سیالکوٹ،ڈاکٹر وقار احمد نیا ز چیئرمین رحمن فاؤنڈیشن،محمد ارسلان خان،چیئرمین رئیل اسٹیٹ ایسوسی ایشن ایگزیکٹو کونسل پنجاب،غلام نبی،میڈم عینی طاہرہ،بدرمنیر ڈائریکٹر سیزن کینولا آئل،سرمد سفیان سی ای او کوارکس پرائیویٹ لمیٹڈ،سیدہ فاطمہ عالیہ گیلانی ماہر سائیکالوجسٹ،سلیم کامران گروپ انچارج جنگ کلچرل ونگ سمیت دیگر نامور شخصیات نے شرکت کی۔س موقع پر گفتگو کرتے ہوئے تقریب کے مہمان خصوصی ممتاز صحافی،کالم نگار،روزنامہ پاکستان کے مدیر اعلیٰ مجیب الرحمن شامی نے کہا شہید پاکستان حکیم سعید کیساتھ میرا تعلق برسوں رہا،میں ہمدرد شوریٰ کا حصہ بھی رہا،جب وہ لاہور تشریف لاتے تو ان کیساتھ بہت ساری نشستیں ہوتیں،وہ ایک ایسی شخصیت تھے کہ جہاں بھی جاتے جشن کا سماع ہوتا۔حکیم سعید کا کاروبار بہت وسیع تھا۔میں نے ایک بار اشفاق احمد صاحب سے پوچھا تھا بابا کون ہوتاہے جس کو ہم عام فہم میں بابا کہتے ہیں،انہوں نے کہا بابا وہ ہو تا ہے جو دوسروں کیلئے سوچتاہے۔حکیم سعید بھی باباتھے انہوں نے ہمیں بہت کچھ دیا، بابا اْسے کہتے ہیں جو ایک ملک بناتاہے اْس کو بابائے قوم کہتے ہیں،حکیم محمد سعید بھی بابا ئے قوم میں شامل ہیں جس طرح بابائے قوم شہید لیاقت علی خان،حکیم سعید شہید نے پوری زندگی سادگی میں گزاری، حکیم سعید وہ شخصیت تھے جو تین جوڑوں میں رہتے تھے اور سب کچھ ہونے کے باوجود بھی اْس گاڑی میں سفرکرتے جس میں اے سی بھی نہیں تھا۔ حکمت،طب،صحت کے حوالہ سے حکیم محمد سعید کا فرمان تھا کہ کم کھانا،کم سونا اور کم بولنا کو اپنی زندگی میں شامل کرلیں تو بیماریاں آپ کے نزدیک نہیں آئیں گی ایسے ایسے کامیاب فارمولے حکیم محمد سعید نے متعارف کروائے، ایجاد کئے جس سے لوگ اب مستفید ہورہے ہیں۔حکیم محمد سعید نے مستقبل کو سنوارا، اہل فکر،دانشوروں کو جوڑا، ہمدرد نونہالوں کے روشن خواب سامنے ہیں۔صوبائی وزیر میاں اسلم اقبال نے کہا تعلیمی اور طب کے میدان میں حکیم محمد سعید کی خدمات ناقابل فراموش ہیں حکیم سعید کا نام ان لوگوں میں شامل ہیں جنہو ں نے حقیقی معنوں میں پاکستان کی خدمت کی،ان کا نام تاریخ میں سنہرے حروف میں لکھا جائے گا۔قوم کے نونہالوں کے روشن مستقبل کیلئے انہوں نے سکولز،کالج اور یونیورسٹی کی بنیاد رکھی ان کی اس قومی خدمت کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔اس موقع پر دیگر مہمانان گرامی نے بھی اپنے خیالات کا اظہارکیا،تقریب کے آخر میں میاں محمد اسلم اقبال،مجیب الرحمن شامی،خالد عیاض خان، احمد اویس ودیگر مہمانان گرامی نے مہمانوں ومقررین میں یادگاری شیلڈیں تقسیم کیں۔ 

اسلم اقبال

مزید :

صفحہ آخر -