قائمہ کمیٹی کا تعلیمی اداروں میں منشیات کے استعمال میں اضافے پر اظہار تشویش 

قائمہ کمیٹی کا تعلیمی اداروں میں منشیات کے استعمال میں اضافے پر اظہار تشویش 

  

اسلام آباد (آن لائن) قومی اسمبلی کی انسداد منشیات کمیٹی نے ملک بھر خصوصاً تعلیمی اداروں میں منشیات کے استعمال میں اضافے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اس حوالے سے اقدامات اْٹھانے کی سفارش کی ہے کمیٹی کا اجلاس چیئرمین صلاح الدین ایوبی کی سربراہی میں منعقد ہوا اجلاس میں کمیٹی اراکین کے علاؤہ سیکرٹری وزارت ڈائریکٹر جنرل اے این ایف سمیت دیگر حکام نے شرکت کی  اجلاس کے دوران چیرمین کمیٹی نے کہا کہ بدقسمتی سے منشیات کی روک تھام کے لیے اجلاس منعقد کی جاتے ہیں اور اس میں قوانین بھی بنائے جاتے ہیں مگر اس پر عملدرآمد نہیں ہورہا ہے اور  آج پورے ملک میں منشیات کے پھیلاؤ میں اضافہ ہورہا ہے انہوں نے کہا کہ ہمیں اس ملک کے نوجوان نسل کو نشے کی لعنت سے بچانا ہوگا انہوں نے کہا کہ اگر اس کمیٹی نے منشیات کی روک تھام میں اپنا بھرپور کردار ادا نہیں کیا تو ہم ذمہ دار ہونگے جس پر سیکرٹری انسداد منشیات اکبر درانی نے کہا کہ اے این ایف فورس کا آپریشنل سٹاف 2ہزار کے لگ بھگ ہے جبکہ پورے ملک میں منشیات کو کنٹرول کرنے کی ذمہ داری ہے انہوں نے کہا کہ آپریشنل فورس کی کمی کی وجہ سے شدید مشکلات کا سامنا ہے کمیٹی کے رکن اقبال آفریدی نے کہا کہ قبائلی اضلاع میں منشیات کی فیکٹریاں چل رہی ہیں اور بڑے بڑے بااثر افراد اس کاروبار میں ملوث ہیں انہوں نے کہا کہ قبائلی اضلاع میں سیکورٹی فورسز بہت زیادہ ہیں اس کے باوجود منشیات ختم کیوں نہیں ہورہی ہیں کمیٹی کے رکن محسن داوڑ نے کہا کہ اے این ایف فورس کی تعداد کم ہے مگر پولیس اپنا کام کیوں نہیں کررہی ہے اور منشیات فروشوں کے خلاف موثر کارروائی کیوں نہیں کی جاتی ہے سیکرٹری وزارت نے کہا کہ بدقسمتی سے پولیس منشیات کے چھوٹے مجرموں پر ہاتھ ڈالتی ہے اور بڑے مجرموں کو چھوڑ دیتی ہے کمیٹی کے رکن نے کہا کہ ایک رپورٹ کے مطابق 60فیصد پولیس اہلکار خود منشیات استعمال کرتے ہیں تو ایسے حالات میں پولیس منشیات فروشوں کے خلاف کیسے کاروائی کرے گی۔   اجلاس کے دوران قائد اعظم یونیورسٹی کے وائس چانسلر نے کہا کہ یونیورسٹی میں منشیات کے مسائل موجود ہیں اور اس حوالے سے اقدامات بھی کئے جارہے ہیں انہوں نے کہا کہ یونیورسٹی کے 700ایکڑ زمین پر قبضے کی وجہ سے مشکلات ہیں اور قابضین میں یونیورسٹی کے ملازمین بھی شامل ہیں انہوں نے کہا کہ یونیورسٹی کے باہر بنے ہوئے ہٹس بھی منشیات کے پھیلاؤ کا سبب بنتے ہیں اجلاس کے دوران وفاقی وزیر انسداد منشیات  نے کہا کہ اگر کمیٹی اپنی طاقت استعمال کرے تو منشیات میں کمی آسکتی ہے انہوں نے کہا کہ پہلے زمانے میں تین قسم کی منشیات تھی مگر افغانستان میں جنگ کے بعد ہیروئن سامنے آئی ہے اور اب مختلف اقسام کے نشے دنیا میں موجود ہیں انہوں نے کہا کہ پوری دنیا میں منشیات کے استعمال اور سمگلنگ میں اضافے کے بعد اس کی روک تھام کے حوالے سے اقدامات شروع کئے گئے انہوں نے کہا کہ اس وقت خیبرپختونخوا میں اے این ایف فورس کو مداخلت کا اختیار نہیں ہے انہوں نے کہا کہ جس ملک میں بنیادی ضروریات کی اشیاء دستیاب نہیں ہیں وہاں پر انسداد منشیات کے لئے حکومت کیا اقدامات کرے گی وفاقی وزیر  اعجاز شاہ نے کہا کہ بھنگ سے کئی قسم کی ادویات بنائی جاتی ہیں اور اس کا اختیار وزارت سائنس وٹیکنالوجی کو دیا گیا ہے انہوں نے کہا انسداد منشیات کے حوالے سے پارلیمنٹ ہاؤس میں بل منظور کیا گیا ہے جس میں چرس اور افیون کی سزائیں بڑھا دی گئی ہے جبکہ بعض منشیات میں سزائے موت تجویز کی گئی ہے اس بل میں ترمیم کی ضرورت ہے اس موقع پر خیبرپختونخوا کے ڈائریکٹر جنرل ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن نے کہا کہ صوبائی اسمبلی کے زریعے ایکٹ میں ترمیم کرکے اے این ایف کو بھی صوبے میں منشیات کی روک تھام کے حوالے سے شامل کریں گے۔

قائمہ کمیٹی

مزید :

صفحہ آخر -