والدہ کا قتل، بیٹے کو سزائے موت، دولاکھ جرمانہ ادا کرنیکا حکم 

والدہ کا قتل، بیٹے کو سزائے موت، دولاکھ جرمانہ ادا کرنیکا حکم 

  

  کوٹ ادو(تحصیل رپورٹر)ٹوکے کے وار سے حقیقی ماں کا سر تن سے جدا کرنے والے سفاک قاتل بیٹے کوایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج عابد حسین ملک نے سزائے موت2لاکھ روپے جرمانہ کا حکم سنا دیا،عدم ادائیگی پر6ماہ مزید قید بھگتنا ہوگی،استغاثہ کے مطابق 2 محرم 22 اگست 2020 کے روزچک نمبر 528 ٹی ڈی اے میں دل خراش واقعہ پیش(بقیہ نمبر58صفحہ6پر)

 آیا تھا، اللہ بخش چانڈیہ کے بیٹے محمدخلیل نے اپنی حقیقی والدہ تاج بی بی سے پیسے مانگے تھے تو والدہ نے انکار کردیاتھاجس پر محمد خلیل طیش میں آگیا تھا اور ٹوکے کے وارسے حقیقی والدہ تاج بی بی کاسر دھڑ سے جدا کردیا، قاتل کو اہل علاقہ نے پکڑ کر پولیس کے حوالے کردیاتھا، تھانہ سٹی پولیس کوٹ ادو نے مقتولہ کے بیٹے محمدسعیدچانڈیہ کی مدعیت میں قتل کا مقدمہ نمبر471/20زیر دفعہ 302 درج کیا تھا،،پولیس تھانہ سٹی کوٹ ادو نے قاتل کی تفتیش کے بعد چالان عدالت میں پیش کیا تھا، دوران سماعت جرم ثابت ہونے پر ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کوٹ ادو عابد حسین ملکنے کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے محمدخلیل کو جرم ثابت ہونے پر سزائے موت کا حکم سناتے ہوئے اس پر2لاکھ روپے جرمانہ بھی عائد کردیا جبکہ عدم ادائیگی پر مزید 6ماہ قید بھگتناہوگی۔

حکم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -