خیبر یونین آف جرنلسٹس کا پولیس کی جانب سے پریس کلب پر دھاوا کیخلاف مظاہرہ

خیبر یونین آف جرنلسٹس کا پولیس کی جانب سے پریس کلب پر دھاوا کیخلاف مظاہرہ

  

پشاور (سٹی رپورٹر) خیبر یونین آف جرنلسٹس نے جمعرات کو پشاور پریس کلب کے باہر پشاور پولیس کی جانب سے پریس کلب پر دھاوا اور صحافیوں کو دھمکیاں دینے کے واقعے کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔مظاہرے کی قیادت پشارو پریس کلب کے صدر ایم ریاض اور خیبر یونین آف جرنلسٹس کے صدر فدا خٹک کر رہے تھے جبکہ کارکن صحافیوں کی بڑی تعداد نے مظاہرے میں شرکت کی۔مظاہرین نے پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے، جس پر پولیس گردی  کے خلاف نعرے درج تھے۔مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے پشارو پریس کلب کے صدر ایم ریاض نے کہا کہ پشاور پولیس نے ڈی ایس پی نے پشارو پریس کلب کے تقدس کو پامال کر کے غنڈا گردی کی انتہا کی ہے، انہوں نے کہا کہ اس واقعے کی ملکی تاریخ میں نظیر نہیں ملتی، ایم ریاض نے کہا کہ صحافی برادری اس واقعے کے خلاف میدان میں نکلے ہیں اور اس تحریک کو منطقی انجام تک پہنچا کے دم لینگے۔خیبر یونین آف جرنلسٹس کے صدر فدا خٹک نے اپنے خطاب میں کہا کہ ڈی ایس پی کینٹ  نے پریس کلب پر حملہ کر کے مظلوموں کو اپنی آواز بلند کرنے سے روکنے کی کوشش کی ہے، جس کی ہم شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں۔انہوں نے کہا پریس کلب صحافیوں کا گھر ہے اور مظلوموں کی جگہ ہے، جہان لوگ آکر اپنی فریاد سناتے ہیں، صحافیوں نے پہلے بھی مظلوموں کی آواز بلند کی ہے اور آئیندہ بھی اپنا فرض نبھاتے رہینگے۔انہوں نے پشاور پولیس کی رویئے کی مذمت کی۔ اس موقع پر مظاہرین نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ پریس کلب کا تقدس پامال کرنے والے ڈی ایس پی کینٹ کو پولیس سروس سے برطرف کیا جائے۔مظاہرین نے اس موقع پر نعرے بازی بھی کی۔درین اثنا ملک بھر سے صحافتی تنظیموں نے پشاور پریس کلب پر پولیس حملے کو آزادی صحافت پر حملہ قرا دیا ہے، راولپنڈی اسلام اباد یونین آف جرنلسٹس، پنجاب یونین آف جرنلسٹس،کراچی یونین آف جرنلسٹس سمیت دیگر صحافتی تنظیموں نے پولیس کے پشاور پریس کلب پر حملے اور صحافیوں کو ہراساں کرنے کے واقعے کی مذمت کی ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -